پاکستان کے سابق وزیر اعظم کے بیٹے کو گرفتار کرلیا گیا

پاکستان کے سابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی کے بیٹے علی گیلانی کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

 مہر خبررساں ایجنسی نے ایکسپریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے سابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی کے بیٹے علی گیلانی کو گرفتار کرلیا گیا۔

 اطلاعات کے مطابق علی موسی گیلانی اور پیپلز پارٹی کے دیگر قائدین کے خلاف پارٹی کی یوم تاسیس پر ریلی نکالی گئی تھی۔  پولیس نے کورونا وائرس کی روک تھام کے لیے عوامی اجتماعات پر پابندی کی خلاف ورزی کرنے پر مقدمہ درج کیا۔

پولیس کے مطابق پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ نون کے درجنوں کارکنان کے خلاف ایف آئی آر درج کی گئی ہے۔ اس سے قبل قلعہ کہنہ قاسم باغ میں سیاسی رہنماؤں اور ورکرز کی جانب سے اسٹیڈیم کا توڑنے پر مقدمہ درج کیا گیا تھا جس میں پی ڈی ایم کے مقامی رہنما جاوید صدیقی ، ، شیخ طارق رشید ، عبدالوحید آرائیں ، اور عبدالقادر گیلانی ،علی قاسم گیلانی سمیت 30 افراد کے خلاف مقدمہ درج  کیا گیا۔

علی گیلانی سیاسی قیادت اور کارکنان سے اظہار یکجہتی کے لیے تھانہ چہلیک پہنچے جہاں پولیس کے مطابق انہوں نے قاسم گیلانی اور دیگر رہنماؤں کے خلاف درج کی گئی ایف آٗی آر بھی پھاڑ دی تھی۔

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے علی موسی گیلانی کی گرفتاری کی شدید مذمت کرتے ہوئے ان کی فوری رہائی کا مطالبہ کیا ہے۔ علاوہ ازیں مسلم لیگ ن کے سیکریٹری جنرل احسن اقبال کی جانب سے بھی سابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی کے بیٹے کی گرفتاری کی مذمت کی گئی ہے۔

تھانہ چہلیک کے باہر پیپلز پارٹی کے کارکنان علی موسی گیلانی کی رہائی اور مقدمات واپس لینے کے لیے احتجاج کررہے ہیں۔

News Code 1904092

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 13 =