امریکی ڈیموکریٹک پارٹی کے امیدوار جوبائیڈن فتح کے قریب پہنچ گئے

امریکہ میں 59ویں صدارتی انتخابات میں ڈیموکریٹک امیدوار جوبائیڈن اورری پبلکن صدارتی امیدوارڈونلڈ ٹرمپ کے درمیان میں کانٹے کا مقابلہ جاری ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایسوسی ایٹڈ پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکہ میں 59ویں صدارتی انتخابات میں ڈیموکریٹک امیدوار جوبائیڈن اورری پبلکن صدارتی امیدوارڈونلڈ ٹرمپ کے درمیان میں کانٹے کا مقابلہ جاری ہے۔ ریاست وسکانسن کے بعد جوبائیڈن امریکی ریاست مشی گن سے بھی کامیاب ہو گئے، بائیڈن کے مجموعی الیکٹورل ووٹ 264 ہو گئے ہیں انہیں اب جیتنے کے لیے 6 الیکٹورل ووٹ درکار ہیں، جبکہ ڈونلڈ ٹرمپ کے الیکٹورل ووٹوں کی تعداد 214 ہے۔

واضح رہے کہ2016 ءکے انتخابات میں امریکی ریاست مشی گن سے ڈونلڈ ٹرمپ کامیاب ہوئے تھے۔ مشی گن کے 16 الیکٹورل ووٹ ہیں۔

جو بائیڈن کو جیتنے کے لیے مزید 6 ووٹوں کی ضرورت ہے جبکہ اب بھی 5 ریاستوں کے نتائج واضح ہونا باقی ہیں ان ریاستوں کے 60 الیکٹورل ووٹ ہیں۔ جن میں ایک ریاست میں جوبائیڈن اور 4 میں ٹرمپ کو برتری حاصل ہے۔

امریکی صدارتی انتخاب کی کہانی چند سوئنگ اسٹیٹس کے فیصلے تک محدود ہو گئی۔ ہزاروں پوسٹل ووٹ اب تک شمار نہیں کیے جاسکے۔ پوسٹل بیلٹ کا فیصلہ کن کردار ہوگا۔

ذرائع کے مطابق نیواڈا میں جو بائیڈن معمولی فرق سے آگے، بائیڈن نے اس ریاست میں برتری برقرار رکھی تو امریکی صدارت کے لیے مطلوبہ 270 ووٹ حاصل کر لیں گے۔

News Code 1903774

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 11 =