دہلی کے فسادات برصغیر کی تقسیم  کے بعد بدترین فساد

بھارت کی عدالت نے نئی دہلی میں ہونے والے مسلم مخالف فسادات کو برصغیر کی تقسیم کے بعد بدترین فساد قرار دیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے بھارتی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بھارت کی عدالت نے نئی دہلی میں ہونے والے فسادات کو برصغیر کی تقسیم  کے بعد بدترین فساد قرار دیا ہے۔  بھارتیعدالت نے اپنے ریمارکس میں رواں سال کے آغاز میں ہونے والے مسلم مخالف فسادات کو تقسیم ہند کے بعد بدترین فسادات قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ فسادات بھارت کے لیے ایک ناسور ہے۔ عدالت نے کہا کہ اتنی کم مدت میں جس تیزی سے یہ فسادات بڑے پیمانے پر پھیلے یہ پیشگی سازش کے بغیر ممکن نہیں۔ واضح رہے رواں سال کے آغاز میں ہونے والے دہلی فسادات میں  47 افراد جان بحق جب کہ مسلمانوں کی املاک کو چُن چُن کر نشانہ بنایا گیا جب کہ  بھارتی دارالحکومت میں مسلمانوں کے درمیان اب بھی خوف کی فضا قائم ہے۔

News Code 1903561

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 8 =