افغان رہنما اور طالبان پرامن حل پر رضامند ہوجائیں، زلمےخلیل زاد

امریکی نمائندہ خصوصی برائے افغانستان زلمےخلیل زاد نےکہا کہ افغان رہنما اور طالبان ماضی کی غلطیوں کو نہ دہرائیں اور موقع سے فائدہ اٹھاتے ہوئے پرامن حل پر رضامند ہوجائیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکی نمائندہ خصوصی برائے افغانستان زلمےخلیل زاد نےکہا کہ افغان رہنما اور طالبان ماضی کی غلطیوں کو نہ دہرائیں اور موقع سے فائدہ اٹھاتے ہوئے پرامن حل پر رضامند ہوجائیں۔

ایک انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ امریکہ پاکستان افغانستان کو دہشتگرد، انتہا پسند گروپوں کے لئے اپنی زمین استعمال نہ کرنے دینے کا معاہدہ کرنے کی حوصلہ افزائی کر رہاہے، امید ہے کہ اس کے حوصلہ افزا نتائج ملیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ افغان امن کیلئے دو سال سے جاری امریکی کوششوں میں پاکستان مددگار ثابت ہوا ہے، افغان 42سال میں پہلی بار ایک میز پر بیٹھے ہیں، یہ امید اور موقع کا لمحہ ہے، تاہم اس لمحے کے اپنے چیلنجز بھی ہیں۔

زلمےخلیل زاد کاکہنا تھا کہ پاکستان نےطالبان کو افغان حکومت کیساتھ مذاکرات اور تشدد میں کمی کیلئے ترغیب دی اور افغان رہنماؤں کیساتھ بات چیت کےسلسلےمیں بھی مددگار ثابت ہوا ہے۔

News Code 1903257

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 3 =