صوبہ سندھ میں جبری مذہبی تبدیلی کے واقعات میں اضافہ

پاکستان کے وفاقی وزیر مذہبی امور نورالحق قادری نے کہا ہے کہ جبری تبدیلی کے واقعات سندھ کے دو تین اضلاع میں زیادہ ہورہے ہیں ان کی انتظامیہ کو طلب کرکے پوچھا جاسکتا ہے۔

 مہر خـبررساں ایجنسی نے ایکسپریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے وفاقی وزیر مذہبی امور نورالحق قادری نے کہا ہے کہ جبری تبدیلی  کے واقعات سندھ کے دو تین اضلاع میں زیادہ ہورہے ہیں ان کی انتظامیہ کو طلب کرکے پوچھا جاسکتا ہے۔

 اطلاعات کے مطابق قائمہ کمیٹی برائے مذہبی امور کو بتایا کہ مذہب کی جبری تبدیلی  کے واقعات سندھ میں زیادہ ہیں۔ سندھ کے دو تین اضلاع میں یہ واقعات ہورہے ہیں۔ ان اضلاع کی انتظامیہ کواسلام آباد طلب کرکے پوچھا جاسکتا ہے۔ مذہبی  امور کی وزارت جبری تبدیلی پر ایک کمیٹی کام کررہی ہے۔ مذہب کی جبری تبدیلی کے بل پر پہلے رپورٹ لےکر پھر اس پر غور کیا جائے۔

News Code 1903133

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha