شہید سلیمانی کے خون نے امریکہ کی ہیبت کو ختم کردیا

اسلامی جمہوریہ ایران کی پارلیمنٹ کے اسپیکر محمد باقر قالیباف نے کہا ہے کہ شہید قاسم سلیمانی کے خون نے امریکہ کی ہیبت کو ختم کردیا اور انقلاب اسلامی کے دوسرے گام میں ملک سے مغربی رجحانات کا خاتمہ ہوجائےگا۔

مہر خبررساں ایجنسی کے نامہ نگار کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کی پارلیمنٹ کے اسپیکر محمد باقر قالیباف نے کہا ہے کہ شہید قاسم سلیمانی کے خون نے امریکہ کی ہیبت کو ختم کردیا اور انقلاب اسلامی کے دوسرے گام میں ملک سے مغربی رجحانات کا خاتمہ ہوجائےگا۔

قالیباف نے ہفتہ دفاع مقدس کی مناسبت سے ایرانی عوام کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا کہ ہم سب  شہداء، جاں نثاروں اور جانبازوں کے مدیون ہیں ۔ محمد باقر قالیباف نے کہا کہ میں فتح المبین کارروائی میں چذابہ کے محاذ پر تھا جنگ شدید اور عروج پر تھی  اور میں نے پہلی بار شہید قاسم سلیمانی کو اس محاذ پر دیکھا اور بیت المقدس کارروائی ميں شہید قاسم سلیمانی کے ساتھ میری کافی آشنائي ہوگئی تھی۔

ایرانی اسپیکر نے کہا کہ دفاع مقدس کے بعد میں تہران میں مشغول ہوگیا اور شہید سلیمانی کرمان میں مصروف ہوگئے لیکن ہمارا ربطہ برقرار رہا۔

محمد باقر قالیباف نے کہا کہ شہید سلیمانی دفاع مقدس کے ایک مؤثر کمانڈر تھے اور جنگ کے دوران ان کی شخصیت نمایاں ہوئی۔ شہید سلیمانی 63 سال کی عمر میں درجہ شہادت پر فائز ہوئے جنگ کے دوران ان کی عمر صرف 25 سال تھی۔

ایرانی اسپیکر نے کہا کہ وہ 20 سال سے زائد عرصہ تک القدس بریگیڈ کے سربراہ رہے اور اس دوران انھوں نے اہم کارنامے رقم کئے اور خطے میں دشمن کی تمام سازشوں کو ناکام بنانے میں انھوں نے اہم کردار ادا کیا۔

شہید حاج قاسم سلیمانی نے 20 سال تک خطے میں امریکہ کو زمین سے لگائے رکھا ، شہید سلیمانی مخلص ، مؤمن اور شجاع کمانڈر تھے ان کا اللہ تعالی کی ذات پر کامل ایمان اور یقین تھا۔ شہید سلیمانی کے ہر کام میں اللہ تعالی کی رضا اور خوشنودی مد نظر ہوتی تھی۔ ان کا ہر قدم اسلام اور مسلمانوں کی سرافرازی اور سربلندی کے لئۓ تھا شہید سلیمانی نے ملک اور قوم کی خدمت میں نمایاں کردار ادا کیا۔

شہید سلیمانی کے خون نے امریکہ کی ہیبت کو ختم کردیا اور انقلاب اسلامی کے دوسرے قدم میں ملک سے مغربی رجحانات کو بھی ختم کردیا جائےگا۔

محمد باقر قالیباف نے کہا کہ شہید سلیمانی کی حضرت زہرا سلام اللہ علیھا ،حضرت امام حسین علیہ السلام ، حضرت عباس علیہ السلام اور حضرت زینب سلام اللہ علیھا کے ساتھ والہانہ محبت تھی ۔ شہادت ان کی دیرینہ آرزو تھی اور اللہ تعالی نے ان کی اس آرزو کو پورا کردیا اور دنیا کے شقی ترین فرد (امریکی صدر ٹرمپ ) کے ہاتھوں وہ درجہ شہادت پر فائز ہوگئے۔  انھوں نے کہا کہ شہید سلیمانی کی شہادت کے بعد ایران پہلا ملک ہے جس نے امریکی فوج پر میزائل داغے اور امریکہ کو التماس پر مجبور کردیا ، امریکہ کی خطے میں فوجی موجودگی علاقائی امن و سلامتی کے لئے خطرہ ہے۔ خطے سے امریکی فوج کا انخلا ضروری ہے اور خطے کے عوام اب امریکہ کو برداشت کرنے کے لئے تیار نہیں ہیں۔

News Code 1903100

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 0 =