کراچی کے ندی نالوں سے 10 افراد کی لاشیں نکال لی گئیں

پاکستان کے شہر کراچی میں گزشتہ روز طوفانی بارش میں ندی اور نالوں میں ڈوبنے والے 10افراد کی لاشیں نکال لی گئی ہیں جبکہ کرنٹ لگنے سے ایک نوجوان لڑکی جان بحق ہوگئی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی  نے پاکستانی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے شہر کراچی میں گزشتہ روز طوفانی بارش میں ندی اور نالوں میں ڈوبنے والے 10افراد کی لاشیں نکال لی گئی ہیں جبکہ کرنٹ لگنے سے ایک نوجوان لڑکی جان بحق ہوگئی ہے۔

اطلاعات کے مطابق لیاقت آباد ڈاک خانے کے قریب گزشتہ روز رات میں بارش کے دوران گڑھے میں پانی جمع ہونے کے باعث دو افراد ڈوب گئے تھے جن میں ایک شہری کو علاقہ مکینوں نے اپنی مدد آپ کے تحت جدوجہد کے بعد نیم بے ہوشی کی حالت میں نکال کر اسپتال منتقل کیا جبکہ اس کے ساتھ ڈوبنے والے 30 سالہ نامعلوم شخص کی لاش جمعہ کی دوپہر ریسکیو عملے نے نکال کر اسپتال پہنچائی تاہم اس کی شناخت نہیں ہوسکی۔

کورنگی کراسنگ ندی سے 27 سالہ نامعلوم نوجوان اور ماڑی پور کے علاقے ہاکس بے نزد فٹبال چوک کے قریب نالے سے ڈوبی ہوئی دو روز پرانی لاش ملیں جنہیں پولیس نے جناح اور سول اسپتال منتقل کیا دونوں کی شناخت نہیں ہوسکی۔

 تیموریہ کے علاقے نارتھ ناظم آباد بلاک ایل کے قریب نالے سے ڈوبی ہوئی 35 سالہ نامعلوم شخص کی لاش ملی جسے عباسی شہید اسپتال منتقل کیا گیا۔ کلفٹن کے علاقے پنجاب چورنگی کے قریب انڈر بائی پاس میں ڈوب کر 14 سالہ ارشد ولد قدیر جاں بحق ہوگیا۔

فرئیر کے علاقے پولو گراﺅنڈ کے قریب سے ڈوبی ہوئی 14 سالہ خیر اللہ ولد خلیل اللہ کی لاش ملی جسے پولیس نے جناح اسپتال منتقل کیا، متوفی ہجرت کالونی کا رہائشی تھا۔ ڈاکٹر سیمی جمالی کے مطابق متوفی کے اہل خانہ بغیر کارروائی لاش لے گئے۔

News Code 1902594

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 17 =