مقبوضہ کشمیر کے اصل باشندوں کے لئے ڈو میسائل لازمی

مقبوضہ کشمیر کی انتظامیہ نے حقیقی باشندوں اور بھارت سے آنے والے نئے آباد کاروں کے درمیان تفریق کو دور کرنے کی غرض سے مستقل رہائشی سرٹیفکیٹ رکھنے والے کشمیریوں کے لئے سرکاری ملازمت اور دیگر فوائد کے حصول کے لیے ڈومیسائل سرٹیفکیٹ لازمی قرار دے دیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے جنگ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ مقبوضہ کشمیر کی انتظامیہ نے حقیقی باشندوں اور بھارت سے آنے والے نئے آباد کاروں کے درمیان تفریق کو دور کرنے کی غرض سے مستقل رہائشی سرٹیفکیٹ رکھنے والے کشمیریوں کے لئے سرکاری ملازمت اور دیگر فوائد کے حصول کے لیے ڈومیسائل سرٹیفکیٹ لازمی قرار دے دیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق اس سلسلے میں اعلان بھارتی وزیر ڈاکٹر جتیندر سنگھ نے نئی دہلی میں پریس بریفنگ کے دوران کیا۔میڈیا کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے ڈاکٹر جتیندر سنگھ نے کہاکہ کچھ حلقوں میں یہ تاثر پیدا کیا جارہا ہے کہ مستقل رہائشی سرٹیفکیٹ رکھنے والے افراد کو ڈومیسائل سرٹیفکیٹ کی ضرورت نہیں ہے۔

انہوں نے کہاکہ وہ ایسی افواہوں سے گمراہ نہ ہوں۔ انہوں نے کہا جموں و کشمیرمیں مستقل رہائشی سرٹیفکیٹ رکھنے والے نیا ڈومیسائل سند حاصل کرنے کے اہل ہیں۔

روزانہ کی پیشرفتوں اور غیر قانونی طور پر بھارت کے زیر قبضہ جموں و کشمیر میں بی جے پی کے اقدامات پر نظر رکھنے والے تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ اس تازہ ترین اقدام کا مقصد جموں و کشمیر کے اصل باشندوں اور ان لوگوں کے درمیان فرق دور کرنا ہے جنہیں بھارتیہ جنتا پارٹی کی حکومت علاقے میں آبادی کا تناسب تبدیل کرنے کے لیے بھارت سے لاکر بسا رہی ہے۔

News Code 1902500

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha