امارات نے اسرائیل کے ساتھ سفارتی تعلقات قائم کرکے اسٹراٹیجک غلطی کا ارتکاب کیا ہے

اسلامی جمہوریہ ایران کی پارلیمنٹ کے اسپیکر کے بین الاقوامی امور کے مشیر نے اسرائیل اور امارات کے درمیان تعلقات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ امارات نے اسرائیل کے ساتھ سفارتی تعلقات قائم کرکے اسٹراٹیجک غلطی کا ارتکاب کیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کی پارلیمنٹ کے اسپیکر کے بین الاقوامی امور کے مشیرحسین امیر عبداللہیان  نے اسرائیل اور امارات کے درمیان تعلقات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہے کہ امارات نے اسرائیل کے ساتھ سفارتی تعلقات قائم کرکے اسٹراٹیجک غلطی کا ارتکاب کیا ہے۔

امیر عبداللہیان نے تہران میں تعینات فلسطینی سفیر صلاح الدین الزواوی سے ملاقات میں امارات کی طرف سے اسرائيل کے ساتھ تعلقات قائم کرنے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ متحدہ عرب  امارات کے مجرمانہ اقدام کے سنگین نتائج برآمد ہوں گے جس کی ذمہ داری اماراتی حکام پر عائد ہوگی۔

امیر عبداللہیان نے فلسطینی عوام کے ساتھ ایران کی ہمبستگی اور تعاون کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایران مشکل شرائط میں اپنے فلسطینی بھائیوں کے ساتھ کھڑا ہے۔ انھوں نے کہا کہ ایران  نے ایک سرکاری خط کے ذریعہ اسلامی ممالک کے پارلیمانی سربراہان سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ امارات کے اس مجرمانہ اقدام کی بھر پور مذمت اور فلسطینی عوام کی حمایت میں اعلامیہ جاری کریں۔ ہم فلسطینی عوام کو تنہا نہیں چھوڑیں گے ۔ فلسطینی عوام کے حقوق کے حصول تک ہماری جد وجہد جاری رہےگی۔

News Code 1902457

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 1 =