تیونس کی پارلیمنٹ نے امارات کے اقدام کو دنیائے اسلام کے خلاف گھناؤنی سازش قراردیدیا

تیونس کی پارلیمنٹ نے امارات کی طرف سے اسرائیل کے ساتھ سفارتی تعلقات قائم کرنے کی مذمت کرتے ہوئے امارات کے اس مجرمانہ اقدام کو مسئلہ فلسطین اور دنیائے اسلام کے خلاف گہری اور گھناؤنی سازش قراردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے اسپوٹنک کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ  تیونس کی پارلیمنٹ نے امارات کی طرف سے اسرائیل کے ساتھ سفارتی تعلقات قائم کرنے کی مذمت کرتے ہوئے امارات کے اس مجرمانہ اقدام کو مسئلہ فلسطین اور دنیائے اسلام کے خلاف گہری اور گھناؤنی سازش قراردیا ہے۔

تیونس کی پارلیمنٹ نے ایک بیان میں امارات کے اقدام کو مسئلہ فلسطین کے ساتھ بہت بڑي غداری اور تاریخی خیانت قراردیتے ہوئے کہا ہے کہ امارات کا مجرمانہ اقدام عرب اقوام  اور اسلامی امت مسلمہ کے لئے بہت بڑا خطرہ بن گیا ہے۔

تیونس کی پارلیمنٹ نے اپنے بیان میں فلسطینیوں کی بھر پور حمایت کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہم فلسطینیوں کے ساتھ ہیں اور مسئلہ فلسطین کو عالم اسلام کا پہلا مسئلہ سمجھتے ہیں۔

News Code 1902365

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha