بحرین کی متحدہ عرب امارات کو اسرائیل کے ساتھ تعلقات برقرار کرنے پر مبارکباد

بحرین کے امریکہ نواز بادشاہ حمد بن آل خلیفہ نے متحدہ عرب امارات کے ولی عہد الشیخ محمد بن زاید آل نھیان سے ٹیلیفون پر بات کرتے ہوئے انہیں اسرائیل کےساتھ معاہدہ کرنے پر مبارک باد پیش کی۔

 مہر خبررساں ایجسی نے العربیہ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بحرین کے امریکہ نواز بادشاہ حمد بن آل خلیفہ نے متحدہ عرب امارات کے ولی عہد الشیخ محمد بن زاید آل نھیان سے ٹیلیفون پر بات کرتے ہوئے انہیں اسرائیل کےساتھ معاہدہ کرنے پر مبارک باد پیش کی۔ متحدہ عرب امارات اور اسرائیل کے درمیان سفارتی تعلقات سے متعلق سجھوتے کے اعلان پر اسلامی ممالک کی طرف سے مذمت کا سلسلہ جاری ہے جبکہ خلیج فارس کی عرب ریاست بحرین کے بادشاہ حمد بن عیسیٰ آل خلیفہ نے متحدہ عرب امارات کے ولی عہد الشیخ محمد بن زاید آل نھیان سے ٹیلیفون پر بات کرتے ہوئے انہیں اسرائیل کےساتھ معاہدہ کرنے پر مبارک باد پیش کی۔ بحرینی بادشاہ نے اسرائیل اور امارات کے درمیان معاہدہ  کرانے میں امریکہ کی کاوشوں کو بھی سراہا ادھرامارات کے ولی عہد الشیخ محمد بن زاید آل نھیان نے مملکت بحرین کی جانب سے خطے کے مفادات اور اقوام کی امن وسلامتی کے لیے کی جانے والی کوششوں کو سراہا ہے۔ واضح رہے کہ امریکہ کے زیر اثر خلیج فارس کی عرب ریاستیں اس سے قبل اسرائیل کے ساتھ خفیہ تعلقات قائم کئے ہوئے تھیں اور اب انھوں نے اپنے خفیہ تعلقات کو آشکار کرنا شروع کردیا ہے۔ ادھر ترکی، ایران، تیونس ، عراق، شام اور دیگر اسلامی ممالک نے خلیجی عرب ریاستوں کے اسرائیل کے ساتھ تعلقات کی بھر پور الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے اسے فلسطینیوں اور عالم اسلام کے ساتھ بہت بڑی خیانت اور غداری قراردیا ہے۔ عرب ذرائع کے مطابق متحدہ عرب امارات کے بعد اسرائیل کے ساتھ سفارتی تعلقات برقرار کرنے کے لئے بحرین، عمان اور سعودی عرب بھی صف میں کھڑے ہیں۔

News Code 1902294

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 9 + 8 =