واشنگٹن میں ایک امریکی عدالت نے سعودی عرب کے ولیعہد محمد بن سلمان کو طلب کرلیا

سعودی عرب کے سابق انٹیلجنس افسر سعد الجبری کی شکایت پر واشنگٹن میں ایک امریکی عدالت نے سعودی عرب کے خونخوار اور بے رحم ولیعہد محمد بن سلمان کو طلب کرلیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے الجزیرہ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ سعودی عرب کے سابق انٹیلجنس  افسر سعد الجبری کی شکایت پر واشنگٹن میں ایک امریکی عدالت نے سعودی عرب کے خونخوار اور بے رحم  ولیعہد محمد بن سلمان کو طلب کرلیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق سعودی عرب کے سابق انٹیلیجنس افسر سعد الجبری کی شکایت پر امریکی عدالت نے سعودی عرب کے ولیعہد محمد بن سلمان کو طلب کیا ہے۔ سعد الجبری کا کہنا ہے کہ سعودی عرب کے ولیعہد محمد بن سلمان انھیں سابق سعودی صحافی جمال خاشقجی کی طرح قتل کرنے کا منصوبہ بنا رہے ہیں۔ امریکی عدالت نے سعودی عرب کے ولیعہد کے ہمراہ 13 سعودی حکام کو بھی طلب کیا ہے جن میں دو افراد امریکہ میں مقیم ہیں۔

سعودی عرب کے سابق انٹیلیجنس افسر اور سابق ولیعہد محمد بن نائف کے قریب معتمد سعد الجبری کا کہنا ہے کہ محمد بن سلمان نے 2018 میں کینیڈا میں ایک ٹیم کے ذریعہ انھیں قتل کرنے کی کوشش کی جسے کینیڈا کی پولیس نے ناکام بنادیا۔ سعودی عرب کے ولیعہد کی جانب سے انھیں جان کا خطرہ لاحق ہے۔

سعد الجبری کو ترکی میں بھی محمد بن سلمان کی جانب سے دھمکی آمیز پیغام موصول ہوتے رہے ہیں۔

واضح رہے کہ سعودی عرب کے ولیعہد محمد بن سلمان کے حکم پر  سابق سعودی صحافی جمال خاشقجی کو ترکی میں سعودی قونصل خانہ میں بڑی بے دردی اور بے رحمی کے ساتھ قتل کردیا گیا تھا اور سعودی عرب نے اب تک خاشقجی کی لاش کو بھی اس کے لواحقین کے حوالے نہیں کیا۔

News Code 1902194

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 0 =