نیب نے سابق وزیر اعظم کی بیٹی مریم نواز سے 1440 کنال اراضی کی رسیدیں طلب کرلیں

پاکستان میں قومی احتساب بیورو (نیب) لاہور نے سابق وزیر اعظم نواز شریف کی بیٹی مریم نواز سے 1440 کنال اراضی کی رسیدیں اوردیگر تفصیلات 11 اگست تک طلب کرلی ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے جنگ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان میں قومی احتساب بیورو (نیب) لاہور نے مریم نواز سے 1440 کنال اراضی کی رسیدیں اوردیگر تفصیلات 11 اگست تک طلب کرلی ہیں۔

اطلاعات کے مطابق  نیب نے مریم نواز سے اراضی خریدنے کے لیے رقم ، ٹیکس اور ڈیوٹی سے متعلق دریافت کیا ہے۔

نیب لاہور نے ہدایت کی ہے کہ مریم نواز 1440 کنال اراضی کی رسیدیں اوردستاویزات 11اگست کو ساتھ لائیں، اس اراضی میں اگر کچھ فروخت کی گئی ہے تو اسکی تفصیلات بھی فراہم کریں ۔

ذرائع کے مطابق مریم نواز سے پوچھا گیا ہے کہ آیا یہ کمرشل استعمال میں ہے یا پھر اس پر کاشتکاری کی جا رہی ہے۔

نیب کے مطابق مریم نواز پررائے ونڈ میں انتہائی سستے داموں غیر قانونی اراضی خریدنے کا الزام ہے، اسکے علاوہ شریف خاندان کی جانب سے بھی 2013ء میں 3 ہزار 568کنال اراضی خلاف قانون خریدی گئی، سب سے زیادہ اراضی نواز شریف کی والدہ شمیم بی بی کے نام منتقل ہوئی جو 1936  کنال ہے ۔

نواز شریف اور شہباز شریف کے نام 12 ،12ایکڑ اراضی منتقل ہوئی، زمین کی منتقلی میں بھی قواعد و ضوابط کو نظر انداز کیا گیا، 2015 ءمیں سابق ڈی جی ایل ڈی اے احد خان چیمہ کے ذریعے لاہور کا ماسٹر پلان تبدیل کروایا گیا اور شریف فیملی کی اراضی کے ارد گرد تعمیرات روکنے کیلئے تمام رقبے کو گرین لینڈ قرار دیا گیا۔

News Code 1902120

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 9 + 5 =