ہمارا رد عمل یقینی ہے / صہیونی اپنے سنگین جرائم کی سزا کے منتظر رہیں

حزب اللہ لبنان نے اپنے ایک بیان میں مقبوضہ فلسطین اور لبنان کی سرحد پر رونما ہونے والے حالات کے بارے میں اسرائیلی دعوؤں کو رد کرتے ہوئے کہا ہے کہ حزب اللہ کا رد عمل یقینی ہے اور صہیونیوں کو سنگین جرائم کی سزا کا منتظر رہنا چاہیے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے المنار کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ حزب اللہ لبنان نے اپنے ایک بیان میں مقبوضہ فلسطین اور لبنان کی سرحد پر رونما ہونے والے واقعات کے بارے میں اسرائیلی دعوؤں کو رد کرتے ہوئے کہا ہے کہ  حزب اللہ کا رد عمل یقینی ہے اور صہیونیوں کو سنگین جرائم کی سزا کا منتظر رہنا چاہیے۔

حزب اللہ لبنان نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ شبعا سرحد پر جو کچھ ہوا ہے سب اسرائیل کی طرف سے ہوا ہے ، حزب اللہ نے ابھی اپنا رد عمل ظاہر نہیں کیا ہے ۔ حزب اللہ کا رد عمل یقینی ہے اور صہیونیوں کو وحشیانہ اور سنگین جرائم کی سزا کا منتظر رہنا چاہیے۔

حزب اللہ نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ مجاہد شہید علی کامل محسن کی شہادت کے بعد اسرائيلی فوج پر خوف و ہراس طاری ہے ،سرحد پر اسرائیلی فوج نے ہائي الرٹ جاری کررکھا ہے اورحزب اللہ کے رد عمل سے پہلے ہی دشمن نے شور اور واویلا شروع کردیا ہے۔

حزب اللہ نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ حزب اللہ کی طرف سے کسی قسم کی کوئی فائر نگ نہیں کی گئی، اور آج جو بھی فائرنگ ہوئی ہے وہ اسرائیل کی طرف سے ہوئی ہے۔ حزب اللہ کا کہنا ہے کہ ہم  شہید علی کامل محسن کی شہادت اور اسرائیل کی آج کی فائرنگ کا بدلہ ضرور لیں گے۔ واضح رہے کہ چند روز قبل اسرائیل نے دمشق ايئر پورٹ کے قریب ہوائی حملے میں حزب اللہ کے جوان علی کامل محسن کو شہید کردیا تھا۔ حزب اللہ کا کہنا ہے کہ وہ شہید علی کامل محسن کی شہادت کا بدلہ ضرور لیں گے جس کے بعد سرحد پر اسرائیلی فوج پر خوف و ہراس طاری ہوگیا ہے۔

News Code 1901884

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 0 =