امریکہ کا سان فرانسسکو کے چینی قونصل خانے میں چينی سائنسداں کے چھپنے کا الزام

امریکی ایف بی آئی نے مشتبہ چینی سائنسدان کے سان فرانسسکو کے چینی قونصل خانے میں چُھپے ہونے کی اطلاع دی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایسوی ایٹڈ پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکی ایف بی آئی نے مشتبہ چینی سائنسدان کے سان فرانسسکو کے چینی قونصل خانے میں چُھپے ہونے کی اطلاع دی ہے۔ چینی سائنسدان پر ویزا میں فراڈ اور فوج سے روابط چُھپانے کا شبہ کیا جارہا ہے۔

ہیوسٹن میں چین کا قونصل خانہ بند کرنے کے بعد چینی سائنسدان کے سان فرانسسکو قونصل خانے میں چھپے ہونے کی خبر نے امریکہ اور چین میں کشیدگی کو بڑھاوا دے دیا ہے۔

امریکی پراسیکیوٹر کے مطابق کیلیفورنیا میں بائیولوجی کی چینی محقق کار تینگ جوآن نے ایف بی آئی کو انٹرویو میں چینی فوج سے روابط کے متعلق جھوٹ بولا تاہم جب تینگ جوآن کی چینی فوجی وردی میں تصاویر اور دیگر شواہد سامنے آئے تو تینگ جوآن چینی قونصل خانے میں روپوش ہوگئیں۔

امریکی اہلکاروں کا کہنا ہے کہ یہ معاملہ چین کے اس پروگرام کا حصہ ہے جس کے تحت وہ چینی سائنسدانوں کو امریکی معلومات چوری کرنے کے لیے خفیہ طور پر امریکہ بھیجتا ہے۔

News Code 1901806

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha