26 افراد کے پاس دنیا کی آدھی آبادی کے برابر ثروت موجود ہے

اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیو گوتریس نے دنیا میں عدم مساوات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ 26 افراد کے پاس دنیا کی آدھی آبادی کے برابر ثروت موجود ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیو گوتریس نے دنیا میں عدم مساوات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ 26 افراد کے پاس دنیا کی آدھی آبادی کے برابر ثروت موجود ہے۔ انھوں نے کہا کہ کورونا وائرس نے معاشرے کی کمزوریاں سب کے سامنے اجاگر اور دنیا کے جھوٹ بے نقاب کردیئے ہیں۔

انتونیو گوتریس نے سالانہ نیلسن منڈیلا لیکچر میں کہا کہ امیر ملک ٹیسٹنگ، علاج کی سہولتیں اور دوائیں اپنے لیے مخصوص کر رہے ہیں، ترقی یافتہ اور امیر ملک کثیر سرمایہ کاری صرف اپنے تحفظ کیلئے کر رہے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ امیر ملک موجودہ خطرناک صورتِحال میں کمزور ملکوں کی مدد میں ناکام ہوگئے اور کورونا وائرس نے یہ جھوٹ بے نقاب کردیا کہ آزاد معیشت " سب کیلئے صحت " کی ضامن ہے۔

اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل کا کہنا تھا کہ کورونا نے اس فریب سے پردہ ہٹادیا کہ موجودہ دنیا نسل پرستی کے بعد والی دنیا ہے، کورونا نے یہ جھوٹ بھی بے نقاب کیا کہ ساری دنیا کے انسان ایک کشتی میں سوار ہیں۔ انھوں نے کہا کہ  افراد کے پاس دنیا کی آدھی آبادی کی مقدار میں ثروت موجود ہے۔

News Code 1901684

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 3 =