امریکہ کی آدھی سے زيادہ آبادی نے صدر ٹرمپ کو نسل پرست قرار دے دیا

امریکہ میں ہونے والے ایک حالیہ سروے کے مطابق امریکہ کی آدھی سے زيادہ آبادی نے صدر ٹرمپ کو نسل پرست قرار دے دیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے غیر ملکی ذرائع کے مطابق امریکہ میں ہونے والے ایک حالیہ سروے کے مطابق امریکہ کی آدھی سے زيادہ آبادی نے صدر ٹرمپ کو نسل پرست قرار دے دیا ہے۔ سروے میں اس بات کا انکشاف کیا گيا ہے کہ 52 فیصد امریکی شہری ، امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو نسل پرست سمجھتے ہیں۔ سروے ميں شامل سینتیس فیصد امریکیوں کے خیال میں ٹرمپ نسل پرست نہیں ہیں۔ صدر ٹرمپ کو حریف سیاسی جماعت ڈیموکریٹ کے سینیٹرز بھی نسل پرست قرار دے چکے ہيں۔

سروے کے مطابق صدر ٹرمپ کو نسل پرست سمجھنے والوں ميں ڈیمو کریٹس، سیاہ فام اور لاطینی امریکیوں کی تعداد زيادہ ہے جبکہ ری پبلکنز میں سے بھی تیرہ فیصد نے صدر ٹرمپ کو نسل پرست قرار دیا۔ سفید فام امریکیوں کی اس بارے میں منقسم رائے سامنے آئی ہے۔ امریکی شہریوں نے سیاہ فام امریکی شہری کی پولیس کے ہاتھوں بہیمانہ ہلاکت کے بعد پرمظاہروں میں امریکی پرچم کو بھی آگ لگا دی ، امریکی شہری بھی امریکی پرچم کو ظلم و ستم کی علامت سمجھتے ہیں۔

News Code 1900644

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 14 =