دنیا کے مختلف دارالحکومتوں میں امریکی عوام کے ساتھ  اظہار یکجہتی

امریکہ میں سیاہ فام امریکی شخص کے پولیس کے ہاتھوں سرعام قتل کے خلاف اور امریکی مظاہرین کی حمایت میں دنیا کے مختلف دارالحکومتوں میں اظہار یکجہتی کیا گیا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے غیر ملکی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکہ میں سیاہ فام امریکی شخص کے پولیس کے ہاتھوں سرعام قتل کے خلاف اور امریکی مظاہرین کی حمایت میں  دنیا کے مختلف دارالحکومتوں میں اظہار یکجہتی کیا گیا۔  واضح رہے کہ چند روز قبل امریکی ریاست مینی سوٹا میں ایک سفید فام امریکی پولیس اہلکار سیاہ فام شخص کی گردن پر گھٹنہ رکھ کر بیٹھ گیا تھا جس کے باعث اس کی موت واقع ہوگئی تھی۔ اس واقعے کے بعد امریکہ  بھر میں طاقت کے اس غلط استعمال اور اس واقعے میں ملوث اہلکاروں کی گرفتاری کے لیے مظاہرے شروع ہوگئے تھے۔ ابتدا میں یہ مظاہرے پرامن تھے، تاہم پولیس اور مظاہرین کے درمیان جھڑپوں کے بعد یہ مظاہرے پرتشدد ہوگئے۔

ان مظاہروں کا دائرہ کار امریکہ سے نکل کر دوسرے شہروں تک پھیلنے لگا ہے، تاہم اب مظاہرین سے یکجہتی کے لیے لندن اور برلن کے بعد نیوزی لینڈ کے مختلف شہروں میں امریکی سفارتخانوں اور قونصلیٹ کے باہر مظاہرے کیے گئے۔

ان مظاہروں میں شریک لوگوں نے جارج فلائیڈ کی موت اور سیاہ فاموں سے امتیازی سلوک کی مذمت کی۔

News Code 1900617

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 3 =