اگر امریکہ نے ایرانی کشتیوں کے لئے مشکل کھڑی کی تو بھر پور جواب دیا جائےگا

اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حسن روحانی نے قطر کے بادشاہ کے ساتھ ٹیلیفون پر گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر امریکہ نے کیریبین سمندر میں ایرانی تیل بردار کشتیوں کے لئے مشکل کھڑی کرنے کی کوشش کی تو منہ توڑ جواب دیا جائےگا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے صدارتی سائٹ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حسن روحانی نے قطر کے بادشاہ کے ساتھ ٹیلیفون پر گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر امریکہ نے کیریبین سمندر میں  ایرانی تیل بردار کشتیوں کے لئے مشکل کھڑی کرنے کی کوشش کی تو منہ توڑ جواب دیا جائےگا۔

صدر حسن روحانی نے قطر اور ایران کے گہرے تعلقات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ  دونوں ممالک کے درمیان اقتصادی سرگرمیوں کا طبی اور حفاظتی پروٹوکول کی رعایت کے ساتھ  دوبارہ آغاز ہوجانا چاہیے۔

صدر حسن روحانی نے قطر میں 2022 میں عالمی المپیک مقابلوں کے انعقاد کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایران اس سلسلے میں قطر کی ہر ممکن مدد اور تعاون کرنے کے لئے آمادہ ہے۔

صدر روحانی نے علاقائی امن و سلامتی کو اہم قراردیتے ہوئے کہا کہ ہم ہرگز کشیدگی کا آغاز نہیں کریں گے لیکن اگر امریکہ نے ایران کے خلاف  کسی قسم کی کوئي شرارت کی تو اسے منہ توڑ جواب دیا جائےگا۔

صدر روحانی نے کہا کہ اگر امریکہ نے کیریبین سمندر میں ایران کی تیل بردار کشتیوں کے راستے میں مشکل کھڑی کرنے اور خلل ایجاد کرنے کی کوشش کی تو ایران اس کا بھر پور جواب دےگا۔

اس گفتگو میں قطر کے بادشاہ شیخ تمیم بن حمد آل ثانی نے دونوں ممالک کے درمیان مشترکہ اقتصادی کمیشن منعقد کرنے پر تاکید کرتے ہوئے کہا کہ علاقائی ممالک کے لئے  خطے میں امن و سلامتی اہم ہے اور اس میں تمام علاقائی ممالک کو اپنا حق ادا کرنا چاہیے اور قطر کشیدگی کے خاتمہ کے سلسلے میں اپنا کردار ادا کرتا رہےگا۔ قطر کے بادشاہ نے چار عرب ممالک کی طرف سے قطر پر پابندیوں کے دور میں ایران کی حمایت اور امداد پر بھی شکریہ ادا کیا۔

News Code 1900387

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 14 =