امریکہ کا چین پر کورونا وائرس کی تحقیق کو چرانے کا الزام

امریکی سکیورٹی ماہرین نے چین پر الزام عائد کیا ہے کہ چینی ہیکرز کورونا وائرس کی ویکسین سے متعلق کی جانے والی تحقیق چوری کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے اسپوٹنک کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکی سکیورٹی ماہرین نے چین پر الزام عائد کیا ہے کہ چینی ہیکرز کورونا وائرس کی ویکسین سے متعلق کی جانے والی تحقیق چوری کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔

اطلاعات کے مطابق امریکی  فیڈرل بیورو آف انویسٹی گیشن (ایف بی آئی) اور ہوم لینڈ سکیورٹی ڈیپارٹمنٹ جلد ہی چین سے تعلق رکھنے والے ہیکروں کو انتباہ جاری کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں کیونکہ چین میں اس وقت حکومتی و نجی کمپنیاں کورونا وائرس کی ویکسین بنانے کے لیے مصروف عمل ہیں۔

ذرائع کے مطابق ہیکرز نا صرف کوویڈ 19 کی ٹیسٹنگ اور علاج سے متعلق معلومات حاصل کرنے کے لیے کوشاں ہیں بلکہ وہ دانشورانہ حقوق ملکیت کو بھی ہدف بنا رہے ہیں۔

رپورٹس میں امریکی حکام نے یہ بھی الزام عائد کیا ہے کہ ہیکروں کا تعلق چینی حکومت سے ہے جنہیں آئندہ دو چار روز میں سرکاری طور پر خبردار کردیا جائے گا۔

ادھر بیجنگ میں وزارتِ خارجہ کے ترجمان ژاؤ لی جیان نے چین پر لگائے گئے کورونا ویکسین کی معلومات سے متعلق چوری کے الزامات اور سائبر حملوں کو مسترد کردیا ہے۔

انہوں نے اپنے  ایک بیان میں کہا کہ اس وقت چین کوویڈ 19 کے علاج اور ویکسین کی تیاری کے عمل میں دنیا کی قیادت کررہا ہے، ایسے میں کسی ثبوت کے بغیر افواہوں پر یقین کرتے ہوئے چین کو اس الزام میں ہدف بنانا بالکل غیر اخلاقی حرکت ہے۔

News Code 1900098

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 5 =