مقبوضہ کشمیر کی انتظامیہ نے وادی کے تمام اور جموں کے تین  اضلاع کو ریڈ زون قراردیدیا

مقبوضہ جموں اور کشمیر کی انتظامیہ نے جموں کے تین اضلاع اور وادی کے تمام اضۂاع کو کورونا وائرس سے شدید متاثرہ علاقہ یا ریڈ زورن قرار دے دیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے کشمیر ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ مقبوضہ جموں اور کشمیر کی انتظامیہ نے جموں کے تین اضلاع اور وادی کے تمام اضۂاع کو کورونا وائرس سے شدید متاثرہ علاقہ یا ریڈ زورن قرار دے دیا ہے۔

اطلاعات  کے مطابق بھارت کی وزارت صحت نے اس سے قبل وادی کے  4 اضلاع سری نگر، باندی پورہ، اننت ناگ اور شوپیاں کو ریڈ زورن سے قرار دیا تھا۔

اطلاعات کے مطابق وادی میں  کورونا وائرس کے کیسز کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے اور ہر ضلعے میں ریڈ زونز بنائے گئے ہیں اور وائرس کے پھیلاؤ میں کمی کے آثار نہیں ہیں۔ وادی کے تمام 10 اضلاع کو مزید احکامات تک ریڈ زون کے طور پر دیکھا جائے گا۔

چیف سیکریٹری بی وی آر سبرامنیم کی جانب سے جاری احکامات کے مطابق اضلاع کو کورونا وائرس کی صورت حال کے مطابق گرین ، ریڈ اور اورنج زونز میں تقسیم کیا جاسکتا ہے۔

مقبوضہ ریاست کی انتظامیہ نے جموں ،  سامبہ، کٹھوعہ کو ریڈ زون، اودھمپور، ریاسی، رامبن اور راجوری کو اورنج جبکہ ڈوڈہ، کشتوار اور پونچھ کو گرین زون قرار دیا ہے۔ انتظامیہ نے مقبوضہ وادی کے تمام اضلاع کو ریڈ زون میں تبدیل کردیا ہے۔

خیال رہے کہ بھارت کی حکومت نے کورونا وائرس کے باعث نافذ لاک ڈاؤن میں 17 مئی تک توسیع کردی ہے تاہم مخصوص پابندیوں میں نرمی بھی کردی ہے۔

این ڈی ٹی وی کے مطابق وزارت صحت کی جانب سے جاری گائیڈ لائنز میں اورنج زون میں بین الریاستی آمد ورفت کی اجازت دی گئی ہے جبکہ اشیائے ضروریہ کی رسد کی بھی اجازت دی گئی ہے۔

بھارت کی وزارت صحت نے دفاتر میں کام بحال کرنے کی اجازت دی ہے لیکن ملازمین کی تعداد کو کم کرکے صرف 30 فیصد رکھنے کی شرط عائد کی گئی ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق مقبوضہ جموں اور کشمیر میں کورونا وائرس کے 726 کیسز کی تصدیق ہوئی ہے اور اب تک 8 افراد جان کی بازی ہار چکے ہیں۔

News Code 1899940

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 0 =