امریکی سپریم کورٹ کا پہلی بار ٹیلی فون کے ذریعہ دلائل سننے کا فیصلہ

امریکی سپریم کورٹ نے آج پہلی بار ٹیلی فون کے ذریعے دلائل سننے کا فیصلہ کیا ہے۔ ٹیلی فون کی ایجاد کے بعد سے امریکہ میں ججز کا فون پر دلائل سننے کا یہ پہلا واقعہ ہوگا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایسوسی ایٹڈ پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکی سپریم کورٹ نے آج پہلی بار ٹیلی فون کے ذریعے دلائل سننے کا فیصلہ کیا ہے۔ ٹیلی فون کی ایجاد کے بعد سے امریکہ میں ججز کا فون پر دلائل سننے کا یہ پہلا واقعہ ہوگا۔ امریکی سپریم کورٹ میں نئے عدالتی ہفتے کے لیے کیسز کی سماعت آج سے شروع ہو گی، عدالت صرف10 کیسز کی سماعت کرے گی، اس طرح سماعت کے دوران سینیارٹی رول اپنایا جائے گا۔  جج سنیارٹی کے لحاظ سے سوالات پوچھیں گے ، چیف جسٹس جان رابرٹس پہلے اور جسٹس بریٹ کاونوف ، آخر میں بات کریں گے۔ ججز کی آمد سے 5 منٹ پہلے اور ان کی آمد کے وقت بجائی جانے والی بزر بھی خاموش رہے گی، وکلاء کو مقامی وقت کے مطابق صبح ساڑھے 9 بجے کال موصول ہوگی۔  کال دلائل کے آغاز سے 30 منٹ پہلے کی جائے گی ، صبح 10 بجے کورٹ آرڈر پڑھا جائے گا۔

News Code 1899902

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 13 =