چین نے کورونا وائرس سے متعلق امریکی الزام مسترد کردیا

چین نے کورونا وائرس کی لیبارٹری میں تیاری کے امریکی الزام کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ عالمی ادارہ صحت نے بھی وائرس کی لیب میں تیاری کو خارج از امکان قرار دے دیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ  چین نے کورونا وائرس کی لیبارٹری میں تیاری کے امریکی الزام کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ عالمی ادارہ صحت نے بھی وائرس کی لیب میں تیاری کو خارج از امکان قرار دے دیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق چین کے محکمہ خارجہ کے ترجمان لی جیان ژاؤ نے ہفتہ وار پریس کانفرنس کے دوران کورونا وائرس کی لیبارٹری میں تیار کرنے کے الزام کو بے بنیاد اور مضحکہ خیز قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ عالمی ادارہ صحت بھی کورونا وائرس کے کسی لبیارٹری میں تیار ہونے کی تردید کی ہے۔ چینی وزارت خارجہ کے ترجمان نے امریکہ کا نام لیے بغیر کہا کہ عالمی ادارہ صحت کے واضح بیان کے باوجود اگر کوئی ملک کورونا وائرس کی لیبارٹری میں تیاری ثابت کرنے کے لیے اپنی توانائی صرف کرنا چاہتا ہے تو خوشی سے اپنا وقت برباد کرسکتا ہے۔ چین کی وضاحت امریکی خفیہ ایجنسی کی جانب سے کورونا وائرس کے کسی لیبارٹری میں تیاری کی تحقیقات کا آغاز کرنے کے بیان کے بعد سامنے آئی ہے۔ امریکی نشریاتی اداروں کے مطابق تحقیقاتی ادارے کورونا کے ووہان کی لیبارٹری میں تیاری کی تفتیش کررہے ہیں تاہم اکثر اہلکاروں کا کہنا ہے کہ وائرس کے لیبارٹری میں تیاری کے امکان کم ہی ہیں۔ واضح رہے کہ کورونا وائرس کے ابتدا سے ہی صدر ٹرمپ اس کو " چائنا وائر" کہہ رہے ہیں اور اس کے جواب میں چین کا کہنا ہے کہ ووہان میں یہ وائرس امریکی فوج نے پھیلایا ہے اور چین اس کے ثبوت میں امریکی محکمہ صحت کی انفلوئنزا کی اچانک پھیلاؤ سے متعلق ایک رپورٹ بھی پیش کی تھی۔

News Code 1899461

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 7 =