امریکی صدر کا امریکہ میں کورونا وائرس کی شدت میں کمی کا دعوی

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے دعوی کیا ہے کہ امریکہ میں کورونا وائرس کی شدت میں اب کمی آرہی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایسوسی ایٹڈ پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے  دعوی کیا ہے کہ امریکہ میں کورونا وائرس کی شدت میں اب  کمی آرہی ہے۔ صدر ٹرمپ پریس کانفرنس سے خطاب  میں انکشاف کیا کہ امریکہ میں کورونا وائرس کی وبا کا عروج "  گزر چکا ہے اور اب اس وبا کی شدت میں بتدریج کمی آرہی ہے۔ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے یہ انکشاف ایک ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب 15 اپریل کے روز، صرف ایک ہی دن میں پورے امریکا سے ناول کورونا وائرس کے 30206 کیسز رپورٹ ہوئے جبکہ اسی ایک دن میں مزید 2482 امریکی شہری بھی کورونا وائرس سے ہلاک ہوگئے۔اب تک کی صورتِ حال یہ ہے کہ امریکا میں ناول کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 644,348 ہوچکی ہے جن میں 30 ہزار سے زائد افراد ہلاک ہوگئے ہیں گزشتہ چند روز کے دوران ڈونلڈ ٹرمپ نے نہ صرف یکم مئی سے امریکا میں لاک ڈاؤن ختم کرنے کا اعلان کیا ہے بلکہ کورونا وبا کےلیے چین کو موردِ الزام ٹھہرانے کے علاوہ عالمی ادارہ صحت پر بھی سخت تنقید کی ہے اور اس ادارے کےلیے امریکی فنڈنگ روک دی ہے ۔ امریکی صدر کے اس اقدام کی عالمی سطح پر مذمت کا سلسلہ جاری ہے۔

News Code 1899455

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 0 =