دہلی میں مسلم کش فسادات میں مسلمانوں کے گھر جلانے سے پہلے لوٹ مار کی گئی

بھارت کے دارالحکومت دہلی میں مسلم کش فسادات میں مسلمانوں کے گھر جلانے سے پہلے لوٹ مار کی گئی۔

مہر خبررساں ایجنسی نے بھارتی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بھارت کے دارالحکومت دہلی میں مسلم کش فسادات میں مسلمانوں کے گھر جلانے سے پہلے لوٹ مار کی گئی۔بھارتی ذرائع ابلاغ نے اپنی رپورٹس میں اس بات کا اعتراف کیا ہے کہ دہلی میں جاری مسلم کش فسادات میں مسلمانوں کے گھر جلائے جانے سے پہلے لوٹ مار کی گئی۔بھارتی میڈیا کے مطابق گھر جلانے سے پہلے ٹی وی ،فریج سمیت جو گھریلو سامان لوٹا جاسکتا تھا  ہندو دہشت گرد بلوائی لوٹ کر ساتھ لے جاتے تھے۔بھارتی میڈیا کا کہنا ہے کہ فسادات کے دوران لوٹے گئےگھروں کو آگ لگا کر علاقے کے دوسرے گھروں پر دھاوا بولا گیا۔بھارت میں انتہا پسندوں کا نشانہ بننے والے 22 سالہ محمد شاہ کا کہنا ہے ہے کہ ان کے گھر میں شرپسندوں کے حملوں کے دوران ایک چٹائی رہ گئی تھی جو اب بارش کے پانی میں ڈوب گئی ہے۔ بھارت میں ہندو دہشت گردوں کے حملوں ميں 47 مسلمان شہید اور سیکڑوں زخمی ہوگئے۔

News Code 1898457

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 1 =