پاکستان کی بھارت کی تمام دفاعی تیاریوں پرنظر

پاکستان فوج کے رابطہ عامہ " آئی ایس پی آر " کے سربراہ میجر جنرل بابر افتخار نے کہا ہے کہ ہم بھارت کی کسی بھی مہم جوئی کے جواب کے لیےہر وقت تیار ہیں۔ پاکستان کی بھارت کی تمام دفاعی تیاریوں پرقریبی نظرہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے جنگ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان فوج کے رابطہ عامہ " آئی ایس پی آر " کے سربراہ  میجر جنرل بابر افتخار  نے کہا ہے کہ ہم بھارت کی کسی بھی مہم جوئی کے جواب کے لیےہر وقت تیار ہیں۔ پاکستان کی بھارت کی تمام دفاعی تیاریوں پرقریبی نظرہے۔  ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل بابر افتخار نے کہا کہ ایک سال پہلے فروری 2019 ميں پاک بھارت جنگ دستک دے چکی تھی ۔ انہوں نے کہا کہ پلوامہ واقعے کے بعد بھارت نے بلا ثبوت پاکستان پر الزام لگائے،ہم نے ایک ذمہ دار ریاست کے طورپر پلوامہ واقعے کی تحقیقات کی آفر بھی کی۔ میجر جنرل بابر افتخار نے بتایا کہ بھارت کی جانب سے گزشتہ سال 26 فروری کو پاکستان پر بزدلانہ کارروائی کی گئی، جو سرپرائز دشمن ہمیں دینا چاہ رہا تھا، وہ خود سرپرائز ہوکر ناکام واپس لوٹ گیا۔ ڈی جی آئی ایس پی آر کاکہنا تھا کہ ہم نے دن کی روشنی میں بھارت کے دو جنگی طیارے گرائے اور ان کا ونگ کمانڈر ابھینندن بھی گرفتار ہوا ، اسی بوکھلاہٹ میں بھارت نے اپنا ہی ہیلی کاپٹر مار گرایا ۔

میجر جنرل بابر افتخار کا کہنا ہے کہ افواج پاکستان نے ایک مرتبہ پھر قوم کی امنگوں پر پورا اتر کر دکھایا ، افواج پاکستان قوم کے غیر متزلزل اعتماد پر پورا اتری ہے۔ ترجمان پاک فوج جنرل بابر افتخارنے کہا کہ آج کا دن یوم تشکر بھی ہے اور یوم عزم بھی، فروری 2019ء میں جو سرپرائز دشمن ہمیں دینا چاہ رہا تھا، وہ خود سرپرائز ہوکر ناکام واپس لوٹ گیا۔ ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کے عوام جس کرب سے گزر رہے ہیں اس کا پورا احساس ہے،مسئلہ کشمیر کو دنیا بھر میں فلیش پوائنٹ کے طور پردیکھا جارہا ہے،دنیا کو مقبوضہ کشمیر سے متعلق پورا ادراک ہے کہ وہاں کیا ہورہا ہے۔

News Code 1898184

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 11 =