دہلی میں دفعہ 144 نافذ/ 11 افراد جاں بحق / فوج طلب کرنے پرغور

بھارتی دارالحکومت نئی دہلی میں امریکی صدر ثرمپ کے منحوس دورے کے دوران پولیس اور ہندو دہشت گردوں نے حملہ کرکے 11 مسلمانوں کو شہید کردیا ہے جس کے بعد دہلی میں دفعہ 144 نافذ کردی گئی ہے اور فوج کو طلب کرنے پر غور کیا جارہا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے بھارتی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بھارتی دارالحکومت نئی دہلی میں امریکی صدر ثرمپ کے منحوس دورے کے دوران پولیس اور ہندو دہشت گردوں نے حملہ کرکے 11 مسلمانوں کو شہید کردیا ہے جس کے بعد دہلی میں دفعہ 144 نافذ کردی گئی ہے اور فوج کو طلب کرنے پر غور کیا جارہا ہے۔ دہلی کے وزیراعلیٰ اروند کیجروال نے کہا ہے کہ اگر شہر میں ضرورت ہوئی تو فوج کو طلب کر لیں گے۔ نئی دہلی میں فسادات کے بعد وزیرِ داخلہ امیت شاہ کی زیرِ صدارت صورتحال پر غور کے لیے اجلاس ہوا۔ اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ نئی دہلی اروند کیجریوال نے کہا کہ ہر کوئی چاہتا ہے تشدد کو روکا جائے۔ انہوں نے بتایا کہ اجلاس میں فیصلہ کیا ہے کہ تمام فریقین نئی دہلی میں امن کی واپسی یقینی بنائیں گے۔اروند کیجروال کا کہنا تھا کہ اس وقت پولیس ایکشن لے رہی ہے، ضرورت  ہوئی تو فوج طلب کریں گے۔ واضح رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے دورہ بھارت کے موقع پر دارالحکومت دہلی میں فسادات روکنے کے لیے دفعہ 144 نافذ کردی گئی ہے۔ ذرائع کے مطابق ہندو دہشت گردوں نے پولیس کی مدد سے 11 مسلمانوں کو شہید اور بڑے پیمانے پر مسلمانوں کی دکانوں ، گاڑیوں ، گھروں ، مسجدوں اور مدرسوں کو نقصان پہنچایا ہے۔ ہندو دہشت گردوں کے حملوں ميں 50 سے زائد افراد زخمی بھی ہوئے ہیں۔

News Code 1898140

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 8 + 0 =