بھارت کا کشمیر پر اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل کی ثالثي پر رد عمل

بھارت نے اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل انٹونیو گوٹرس کی جانب سے مسئلہ کشمیر پر ثالثی کی پیش کش پر سخت رد عمل ظاہر کیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے انڈیا ٹوڈے کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بھارت نے اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل انٹونیو گوٹرس کی جانب سے مسئلہ کشمیر پر ثالثی کی پیش کش پر سخت رد عمل ظاہر کیا ہے۔ بھارت نے اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل انٹونیو گوٹرس کی جانب سے مسئلہ کشمیر پر ثالثی کی پیش کش کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ کشمیر پر ثالثی کی کوئی گنجائش نہیں ہے کیونکہ کشمیر بھارت کا اٹوٹ حصہ ہے۔ اطلاعات کے مطابق بھارت کی وزارت امورخارجہ کے ترجمان رویش کمار کا کہنا ہے کہ کشمیر کے پاکستان والے حصہ پر بات چيت ضروری ہے کیونکہ کشمیر بھارت کا اٹوٹ انگ ہے۔ کشمیر کے مسئلہ پر ثالثی کی کوئی ضرورت نہیں ہے۔ واضح رہے کہ اقاو متحدہ کے سکریٹری جنرل پاکستان کے دورے پر ہیں جہاں اس نے کشمیر کے مسئلہ کو بات چيت کے ذریعہ حل کرنے پر تاکید کرتے ہوئے کہا ہے کہ اقوام متحدہ کشمیر پر ثالثی کا کردار ادا کرنے کے لئے تیار ہے۔

News Code 1897912

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 0 =