ممبئی ، بھارتی وزیر اعظم سے بھارت کو آزاد کرنے کے نعروں سے گونج گیا

بھارت کے متنازع شہریت قانون ( سی اے اے) کے خلاف ممبئی میں ہزاروں افراد نے احتجاج کیا، جلسہ گاہ نریندر مودی کے خلاف نعروں اور فیض احمد فیض کی نظم " ہم دیکھیں گے" کی صداؤں سے گونج اٹھا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے بھارتی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بھارت کے متنازع شہریت قانون ( سی اے اے) کے خلاف ممبئی میں ہزاروں افراد نے احتجاج کیا، جلسہ گاہ نریندر مودی کے خلاف نعروں اور فیض احمد فیض کی نظم " ہم دیکھیں گے" کی صداؤں سے گونج اٹھا۔  ممبئی کے معروف آزاد میدان میں ہونے والے اس احتجاجی جلسے کا اہتمام شہریت ترمیمی قانون ، نیشنل رجسٹر آف سٹیزنز اور نیشنل پاپولیشن رجسٹر کے خلاف بننے والے قومی اتحاد کی مہاراشٹریہ تنظیم نے کیا۔ احتجاجی جلسے میں ممبئی کے مختلف علاقوں سے تعلق رکھنے والے مظاہرین نے شرکت کی جن میں خواتین کی بڑی تعداد بھی شامل تھی۔ اس موقعے پر شہریت قانون کو بھارتی پارلیمنٹ کے جاری اجلاس میں تبدیل کرنے کا مطالبہ بھی کیا گیا۔

جلسے کے شرکا نے بھارتی وزیر اعظم اور وزیر داخلہ کے خلاف " مودی، شا سے آزادی" کے نعرے لگائے اور یک آواز ہوکر معروف شاعر فیض احمد فیض کی نظم " ہم دیکھیں گے"  بھی پڑھتے رہے۔ واضح رہے کہ بھارت میں متنازعہ شہریت قانون کے خلاف کئي شہروں میں احتجاجی مظاہروں کا سلسلہ جاری ہے۔

News Code 1897890

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 6 =