پاکستانی حکومت کا آٹا اور چینی کی مہنگائی میں حکومت کی کوتاہی کا اعتراف

پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نےاعتراف کیا ہے کہ آٹا اور چینی مہنگا ہونے میں حکومت نے غفلت اور کوتاہی کی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایکس پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نےاعتراف  کیا ہے کہ آٹا اور چینی مہنگا ہونے میں حکومت نے غفلت اور کوتاہی کی ہے۔ وزیراعظم عمران خان نے لاہور میں صحت انصاف کارڈ تقسیم کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میں نے یہ نہیں کہا کہ پاکستان کو ایشین ٹائیگر بنائیں گے، میں نے کہا تھا کہ پاکستان کو ریاست مدینہ کے اصولوں پر فلاحی ریاست بنائیں گے، منصوبہ بندی کے تحت حکومت کے خلاف مہم چلائی جارہی ہے اور پلان کرکے تاثر دیا جارہا ہے کہ ملک میں صورتحال ٹھیک نہیں، ہر بات پر دوسرا سوال یہ پوچھا جاتا ہے کہ کہاں ہے نیا پاکستان؟۔

عمران خان نے کہا کہ روپے کی قدر گرنے سے گھی کی قیمت میں اضافہ ہوا، سب پتہ چل گیا ہے کہ کس نے مہنگائی کر کے فائدہ اٹھایا، آٹا چینی مہنگا ہونے میں ہماری کوتاہی ہے یہ میں مانتا ہوں، انکوائری ہور ہی ہے مہنگائی سے پیسہ بنانے والوں کو نہیں چھوڑیں گے۔ انہوں نے کہا کہ اصلاحات کے تحت اسپتالوں میں انتظامی تبدیلیاں لےکر آرہے ہیں، لیکن افسوس ہے کہ کچھ لوگ اسپتالوں میں اصلاحات لانے کے مخالف ہیں۔ عمران خان نے کہا کہ عام آدمی کو ریلیف دینے کے لیے یوٹیلیٹی اسٹورز پر 15 ارب کا پیکج دیا ہے، آٹا اور چینی کی سرکاری قیمتوں پر فراہمی کو یقینی بنایا جائے، اشیاء خورونوش کا مصنوعی بحران پیدا کرنے والوں سے سختی سے نمٹا جائے۔

News Code 1897873

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 7 =