پاکستان کی قومی اسمبلی میں ہنگامہ آرائی/ اجلاس ملتوی

پاکستان کی قومی اسمبلی کے اجلاس میں عمر ایوب کی جانب سے سابق صدر آصف زرداری کو مسٹر 10 پرسنٹ کہنے پرشدید ہنگامہ آرائی ہوئی جس کے بعد اجلاس ملتوی کردیا گیا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے پاکستانی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کی قومی اسمبلی کے اجلاس میں عمر ایوب کی جانب سے سابق صدر آصف زرداری کو مسٹر 10 پرسنٹ کہنے پرشدید  ہنگامہ آرائی ہوئی جس کے بعد اجلاس ملتوی کردیا گیا۔  پاکستان کی قومی اسمبلی اجلاس کے دوران اظہار خیال کرتے ہوئے وفاقی وزیر توانائی عمر ایوب کا کہنا تھا کہ 60 سے 70 کی دہائی میں مہنگائی ہوئی، مسلم لیگ ن 30 ہزار ارب روپے تک قرضہ لے گئی جب کہ پیپلزپارٹی کی سابقہ حکومت نے 15000 ہزار ارب روپے تک قرضہ چھوڑا۔

اسی دوران وفاقی وزیر توانائی عمر ایوب نے سابق صدر اور شریک چیئرمین پاکستان پیپلزپارٹی آصف زرداری کو مسٹر 10 پرسنٹ کہا جس پر پیپلزپارٹی کی جانب سے احتجاج کیا گیا اور پارٹی ارکان نے عمر ایوب کی چیئر کا گھیراؤ کرکے حکومت کے خلاف نعرے بازی کی۔

پیپلز پارٹی ارکان نے ایجنڈے کی کاپیاں بھی پھاڑدیں جب کہ رہنما پیپلزپارٹی آغا رفیع اللہ حکومتی ارکان سے گتھم گتھا ہوگئے اور سابق صدر ایوب خان کے خلاف نعرے لگائے۔ ہنگامہ آرائی کے بعد ڈپٹی اسپیکر نے اجلاس کی کارروائی 10 منٹ کے لیے معطل کی تاہم بعد میں اجلاس کل صبح 11 بجے تک کے لیے ملتوی کردیا گیا۔

News Code 1897800

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 10 =