بھارت نے مسئلہ کشمیر پر امریکی ثالثی کی پیشکش کو رد کردیا

بھارت نے امریکی صدر ٹرمپ کی کشمیر پر ثالثی کی پیشکش کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ مسئلہ کشمیر پاکستان اور بھارت کا دوطرفہ معاملہ ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ڈیلی پاکستان کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بھارت نے امریکی صدر ٹرمپ کی کشمیر پر ثالثی کی پیشکش کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ مسئلہ کشمیر پاکستان اور بھارت کا دوطرفہ معاملہ ہے۔ اور پاکستان کے ساتھ بات چیت کا سلسلہ تب ممکن ہے جب پاکستان دہشتگردی روکے، حکومت اپنے موقف پر قائم ہے بات چیت اور دہشتگردی ایک ساتھ چل نہیں سکتے۔گزشتہ روز سوئٹزرلینڈ کے شہر ڈیووس میں عالمی اقتصادی فورم کے موقع پر پاکستانی وزیر اعظم عمران خان نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے ملاقات کی جس میں صدر ٹرمپ نے مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے اپنا کردار ادا کرنے کی پیشکش کی۔ ذرائع کے مطابق پاکستانی وزير اعظم کا مسئلہ کشمیر کے حوالے سے امریکی صدر ٹرمپ سے توسل کرنا ، اسلام اور مسلمانوں کی بہت بڑی توہین ہے۔بڑے شیطان کے سامنے دست توسل دراز کرنے مسئلہ کشمیرتو حل نہیں ہوگا لیکن اس سے پاکستانی وزیر اعظم کی حیثیت اور اس کے خمیر کا پتہ چل گیا ہے۔

News Code 1897280

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 5 =