امریکی صدارتی امیدوار کا عراق اور شام سے امریکی فوج کو نکالنے کا مطالبہ

امریکی صدارتی امیدوار کی دوڑ میں شامل تلسی گیبارڈ نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ پر شدید تنقید اور شہید میجر جنرل قاسم سلیمانی پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایران اور امریکہ کے درمیان کشیدگی کے اصلی ذمہ دار امریکی صدر ٹرمپ ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی ایسوسی ایٹڈ پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکی صدارتی امیدوار کی دوڑ میں شامل ڈیموکریٹس کی تلسی گیبارڈ نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ پر شدید تنقید اور شہید میجر جنرل قاسم سلیمانی پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایران اور امریکہ کے درمیان کشیدگی کے اصلی ذمہ دار امریکی صدر ٹرمپ ہیں۔ ڈیموکریٹس کی تلسی گیبارڈ نے اپنے ایک بیان میں امریکہ کی جانب سے ایرانی جنرل قاسم سلیمانی پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر امریکہ نے عراق اور شام سے اپنی فوجیں نہیں نکالیں تو گہری دلدل اور ایسی جنگ میں پھنس جائیں گے، جس کے سامنے عراق اور افغانستان کی جنگیں پکنک لگنےلگیں گی۔ تلسی گیبارڈ نے کہا کہ ٹرمپ کی جانب سے جنگ کی پہل کی گئی ہے، ٹرمپ نے امریکہ کو ایران کے خلاف جنگ کی جانب دھکیل کیا ہے، ایک ایسی جنگ جس میں ہمیں پہلے سے زیادہ نقصان کے علاوہ کچھ حاصل نہیں ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ میں یہ جاننا چاہتی ہوں کہ اس جنگ کے پیچھے ہماری پالیسی کیا ہے ؟ ہم کیا حاصل کرنا چاہتے ہیں اور اس جنگ کو چھیڑ کر ہمارا مفاد اور  ہمارا مشن کیا ہے ؟

تلسی نے مزید کہا کہ یہ بات واضح ہے کہ ٹرمپ کے اس عمل نے ہمارے ملک کی قومی سلامتی کو داؤ پر لگا دیا ہے اور ٹرمپ کے اقدامات نے ہمارے قومی سلامتی کے مفادات کو مجروح کیا ہے۔

News Code 1896854

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 8 =