ایران ، روس اور چین کا بحری خطرات کے پیش نظر مشترکہ بحری مشقیں منعقد کرنے کا فیصلہ

اسلامی جمہوریہ ایران ، روس اور چین کی مشترکہ بحری مشقوں کے ترجمان اور ایرانی نیول آپریشنز کے ڈپٹی کمانڈر غلامرضا طحانی نے کہا ہے کہ بحری خطرات کے پیش نظر ایران ، روس اور چین نے مشترکہ بحری مشقیں منعقد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران ، روس اور چین کی مشترکہ بحری مشقوں کے ترجمان اور ایرانی نیول آپریشنز کے ڈپٹی کمانڈر غلامرضا طحانی نے کہا ہے کہ بحری خطرات کے پیش نظر ایران ، روس اور چین نے مشترکہ بحری مشقیں منعقد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ انھوں نے کہا کہ روس ،چین اور ایران نے فوجی تعاون مزید مضبوط بنانے اور مشترکہ خطرات سے منٹنے کا فیصلہ کیا ہے۔

طحانی نے کہا کہ تجارتی اور اقتصادی کشتیوں کی رفت و آمد کو محفوظ بنانے کے لئے یہ خطہ انتہائی اہمیت کا حامل ہے ۔آبنائے ہرمز، آبنائے مالاگا، اور آبنائے باب المندب معروف طلائی مثلث ہے یہ خطہ عالمی تجارت اور اقتصاد کے حوالے سے بڑا اہم اور اقتصادی مفادات کے تحفظ کا ضامن ہے ۔ انھوں نے کہا کہ روس ، ایران اور چين نےمشترکہ بحری مشقوں میں بحری خطرات سے نمٹنے میں مشترکہ حکمت عملی طے کی ہے اور مشترکہ فوجی تعاون کو مضبوط بنانے کا فیصلہ کیا ہے ۔

News Code 1896545

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 4 =