افغانستان میں 700 داعش دہشت گرد گرفتار/ دہشت گردوں ميں پاکستانی دہشت گرد شامل

افغان فوج نے داعش سے منسلک 700 دہشت گردوں کو گرفتار کرلیا ہے دہشت گردوں ميں پاکستانی، اردنی اور مشرقی ایشیا کے دہشت گرد بھی شامل ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے افغان ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ افغان فوج نے داعش سے منسلک 700  دہشت گردوں کو گرفتار کرلیا ہے دہشت گردوں ميں پاکستانی، اردنی اور مشرقی ایشیا کے دہشت گرد بھی شامل ہیں۔ اطلاعات کے مطابق افغان نیشنل ڈیٹریوریٹ فار سکیورٹی (این ڈی ایس)کی طرف سے جاری ایک بیان میں بتایا گیا ہے کہ انہوں نے داعش کے 700اراکین کو گرفتار کیا ہے۔ ان کے ساتھ ان کی 17بیویوں اور 159بچوں کو گرفتار کیا گیا ہے۔ این ڈی ایس کے مطابق دہشت گردوں میں 277 غیرملکی ہیں جن میں سے زیادہ تر کاتعلق پاکستان، اردن اور مشرقی ایشیائی ممالک سے ہے۔ واضح رہے کہ شام میں داعش دہشت گردوں کے خاتمے کے بعد تواتر سے خبریں آ رہی تھیں کہ امریکہ اور سعودی عرب  داعش دہشت گردوں کو افغانستان منتقل کر رہے ہیں۔ داعش دہشت گردوں کی تشکیل اور انھیں پیشرفتہ ہتھیار فراہم کرنے کے لئے امریکہ ، اسرائیل اور سعودی عرب نے اہم کردار ادا کیا جبکہ ایک دور میں ترکی بھی ان کے ہمراہ تھا اور ترکی میں داعش دہشت گردوں کی تربیت کے کیمپ لگائے گئے تھے۔ لیکن عراق اور شام میں داعش دہشت گردوں کو شکست ہوگئی جس کے بعد امریکہ نے انھیں افغانستان منتقل کرنے میں اہم کردار ادا کیا۔ امریکہ اور سعودی عرب نے داعش کے ذریعہ عراق اور شام کو تباہ کرنے میں کوئی کسر باقی نہیں چھوڑی ۔

News Code 1896411

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 12 =