نریندر مودی بابری مسجد اور مسلمانوں کا قاتل ہے

پاکستان کی جماعت اسلامی کے سربراہ سراج الحق نے کہا ہے کہ بھارتی وزير اعظم نریندر مودی بابری مسجد اور گجرات کے3 ہزار مسلمانوں کا قاتل ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایکس پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کی جماعت اسلامی کے سربراہ سراج الحق نے اسلام آباد میں کشمیر ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارتی وزير اعظم نریندر مودی بابری مسجد اور گجرات کے3 ہزار مسلمانوں کا قاتل ہے۔ پاکستان کی جماعت اسلامی کے سربراہ نے کہا کہ مودی بابری مسجد اور گجرات کے3 ہزار مسلمانوں کا قاتل ہے، پانچ اگست کا واقعہ بھی اچانک نہیں ہوا بلکہ یہ مودی کے منشور کا حصہ تھا پھر وہ وزیراعظم بن گیا، مودی کہتا میرے تین وعدے تھے بابری مسجد کی جگہ مندر بنانا، مقبوضہ کشمیر کو ختم کرکے بھارت کا حصہ بنانا اور اب کہتا ہے کہ اکھنڈ بھارت بھی کرکے دکھاؤں گا۔ سراج الحق  کا کہنا تھا کہ انتہا پسند بھارت نے مقبوضہ کشمیر کا آئین اور جھنڈا ختم کردیا ہے، کشمیرکی حیثیت ختم کردی گئی اور وہاں اردو زبان پر بھی پابندی لگا دی گئی ہے، ریڈیو کا نام بھی انڈیا ریڈیو سرینگر نام رکھ دیا گیا،  بھارتی قابض فوج مظلوم کشمیریوں کو نماز پڑھنے کی بھی اجازت نہیں دیتی، لیکن ہمارے حکومتی ایوانوں میں بیٹھے لوگ اندھے گونگے اور بہرے ہیں انہیں اپنے مفادات عزیز ہیں، وزیراعظم عمران خان نے کہا تھا ہر جمعہ کے روزکو آدھا گھنٹہ احتجاج کریں گے لیکن وہ اب اسے بھی بھول گئے، جن لوگوں کو بے بس کردیا گیا ہے وہ ان ایوان میں بیٹھے لوگوں کو دیکھ رہے ہیں۔ اس نے کہا کہ پاکستانی عوام کشمیر اور بھارتی عوام کے ساتھ کھڑی ہے۔

News Code 1896396

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 2 =