پاکستانی حکومت کا مشرف کو سزائے موت سنانے والے جج کے خلاف ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ

پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت اہم اجلاس میں سابق صدر پرویز مشرف کو سزائے موت سنانے والے جج جسٹس وقار سیٹھ کے خلاف ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایکس پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت اہم اجلاس میں سابق صدر پرویز مشرف کو سزائے موت سنانے والے جج جسٹس وقار سیٹھ کے خلاف ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ وفاقی حکومت نے سابق صدر جنرل (ر) پرویز مشرف کے خلاف سنگین غداری کیس سننے والی خصوصی عدالت کے جج جسٹس وقار سیٹھ کے خلاف سپریم جوڈیشل کونسل میں ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ اجلاس میں اتفاق کیا گیا ہے کہ ڈی چوک میں پرویز مشرف کو لٹکانے کی بات کرکے انسانی حقوق کی حدود کو پار کیا گیا۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ اجلاس میں وزیر اعظم عمران خان کو لیگل ٹیم نے بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ خصوصی عدالت کا فیصلہ انسانی حقوق کی پامالی ہے۔ اجلاس میں قانونی ماہرین کی رائے پر جسٹس وقار سیٹھ کے خلاف ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

News Code 1896330

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 9 + 8 =