بھارتی حکومت نے مسلمانوں کے خلاف جنگ کا آغاز کردیا

پاکستان کے صدر عارف علوی نے مودی سرکار کی طرف سے پورے بھارت کو گجرات بنانے کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی نے بھارتی مسلمانوں کے خلاف جنگ کا آغاز کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایکس پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے صدر عارف علوی نے مودی سرکار کی طرف سے پورے بھارت کو گجرات بنانے کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی نے بھارتی مسلمانوں کے خلاف جنگ کا آغاز کردیا ہے۔

صدر عارف علوی نے ایک ویڈیو ٹوئٹ کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ روز سے اب تک بھارت سے ہزاروں پیغامات موصول ہو چکے ہیں جس میں سے ایک کو ٹوئٹ کر رہا ہوں، یہ لڑکی روتے ہوئے دہلی میں جامعہ ملیہ یونیورسٹی کے اندر بھارتی پولیس کی جانب سے لڑکیوں پر بہیمانہ تشدد کے حوالے سے بتا رہی ہے۔ صدر عارف علوی نے مزید کہا کہ مودی حکومت ہندوتوا فسطائیت کو استعمال کرتے ہوئے مسلمانوں کے خلاف جنگ کر رہی ہے۔

واضح رہے کہ مودی حکومت نے مسلمانوں سے امتیازی سلوک پر مبنی شہریت کا متنازع قانون منظور کیا ہے جس کے تحت پاکستان، افغانستان اور بنگلہ دیش سے آنے والے غیر مسلم تارکین وطن کو شہریت دی جائے گی لیکن مسلمانوں کو شہریت نہیں دی جائے گی۔اس قانون کے خلاف بھارت بھر میں بڑے پیمانے پر احتجاجی مظاہرے ہورہے ہیں جس میں متعدد افراد ہلاک اور زخمی ہو چکے ہیں۔ بھارتی سکیورٹی فورسز نے دہلی کی جامعہ ملیہ یونیورسٹی میں طلبہ اور طالبات کو بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنایا ہے جس کے نتیجے میں درجنوں طلباء اور طالبات شہید اور زخمی ہوگئے ہیں۔ ادھر علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں بھارتی سکیورٹی فورسز نے حملہ کرکے سیکڑوں طلباء کو گرفتار ، شہید اور زخمی کردیا ہے۔ ہندوستان بھر میں مسلمانوں کے خلاف ظالمانہ قانون کی مذمت میںم ظاہرے شروع ہوگئے ہیں۔ بھارتی وزير اعظم نریندر مودی نے پورے بھارت کو گجرات بنادیا ہے۔

News Code 1896227

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 1 =