ایرانی طلباء نے 13 آبان کی ریلیوں میں امریکی پرچم کو نذر آتش کردیا

ایرانی طلباء نے 13 آبان عالمی سامراج کے ساتھ مقابلے کے دن کی مناسبت سے دنیا بھر میں امریکی مظالم اور جرائم کی مذمت کی اور امریکی پرچم کوظلم و ستم کا مظہر قراردیتے ہوئے اسے نذر آتش کردیا۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق ایرانی طلباء نے 13 آبان  عالمی سامراج کے ساتھ مقابلے کے دن کی مناسبت سے دنیا بھر میں امریکی مظالم اور جرائم کی مذمت کی اور امریکی پرچم کوظلم و ستم کا مظہر قراردیتے ہوئے اسے نذر آتش کردیا۔ اطلاعات کے مطابق ایران کے دارالحکومت تہران سمیت تمام چھوٹے بڑے شہروں، قصبوں اور دیہاتوں میں عالمی سامراج سے مقابلے کے قومی دن کی مناسبت عظيم الشان ریلیوں کا اہتمام کیا گيا ہے ۔ ایرانی فضائيں ایک بار پھر امریکہ مردہ باد کے نعروں سے گونج رہی ہیں ۔طلباء اور طالبات نے امریکہ کے ساتھ مذاکرات کو ممنوع قراردیتے ہوئےکہا ہے کہ بڑے شیطان کے ساتھ مذاکرات کا کوئی فائدہ نہیں۔ اس موقع پر امریکی پرچم کو دنیا بھر میں ظلم و ستم کا مظہر قراردیتے ہوئے نذرآتش کردیا گیا۔

News Code 1895112

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 3 =