پاکستانی حکومت نے فضل الرحمن کے مطالبات مسترد کردیئے

پاکستانی حکومت نے جمعیت علماء اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کے مطالبات مسترد کرتے ہوئے فیصلہ کیا ہے کہ نہ تو وزیراعظم عمران خان مستعفی ہوں گے اور نہ ہی نئے انتخابات ہوں گے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے پاکستانی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستانی حکومت نے جمعیت علماء اسلام (جے یو آئی ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کے مطالبات مسترد کرتے ہوئے فیصلہ کیا ہے کہ نہ تو وزیراعظم عمران خان  مستعفی ہوں گے اور نہ ہی نئے انتخابات ہوں گے۔ اطلاعات کے مطابق بنی گالا میں وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت تحریک انصاف کی کور کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں آزادی مارچ سے نمٹنے کے لیے لائحہ عمل طے کیا گیا۔

حکومتی مذاکراتی کمیٹی کے سربراہ پرویز خٹک نے وزیراعظم کو اپوزیشن سے رابطوں پر بریفنگ دی اور آزادی مارچ سے نمٹنے کی تجاویز بھی پیش کیں۔ اجلاس کے دوران اہم فیصلے کیے گئے۔

کور کمیٹی نے فیصلہ کیا کہ نہ تو وزیراعظم عمران خان مستعفی ہوں گے اور نہ ہی ملک میں نئے انتخابات ہوں گے، جبکہ امن و امان کی صورتحال خراب کرنے والے شرپسندوں سے سختی سے نمٹا جائے گا۔

News Code 1895076

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 1 =