شمالی شام میں کرد ملیشیا کے ساتھ جھڑپ میں  ترکی کا ایک فوجی ہلاک اور 5 زخمی

شمالی شام میں کرد ملیشیا کے ساتھ جھڑپ میں ترک فوج کے قافلے پر راکٹ حملہ کردیا جس کے نتیجے میں ایک ترک فوجی ہلاک اور 5 زخمی ہوگئے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ شمالی شام میں کرد ملیشیا نے ترک فوج کے قافلے پر راکٹ حملہ کردیا جس کے نتیجے میں ایک ترک فوجی ہلاک اور 5 زخمی ہوگئے ہیں۔  اطلاعات کے مطابق شمالی شام میں جنگ بندی کے باوجود ترک فوج اور کرد ملیشیا  کے درمیان جھڑپوں کے اکا دکا واقعات کا سلسلہ جاری ہے، ترک فوج نے کردوں کے زیر تسلط علاقوں میں آپریشن کیا جب کہ جواب میں کرد ملیشیا نے ترک فوج پر راکٹ داغے۔ ترک محکمہ دفاع کے ترجمان نے اپنے بیان میں بتایا کہ راس العین میں ترک فوج کے قافلے پر کرد ملیشیا کے راکٹ حملے میں ایک اہلکار ہلاک اور 5 زخمی ہوگئے۔ زخمیوں کو ملٹری اسپتال میں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے جن میں سے 2 اہلکاروں کی حالت نازک ہے۔ ترک فوج نے کردوں کے علاقے میں سرچ آپریشن کا آغاز کردیا ہے تاہم کسی قسم کی جھڑپ یا گرفتاری کی کوئی اطلاع نہیں ملی ہے۔ کرد ملیشیا کا کہنا ہے کہ ترک فوجیوں نے سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے آپریشن جاری رکھا ہوا ہے۔

News Code 1894916

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 5 =