پاکستان اور بھارت کے درمیان کرتار پور راہداری معاہدے پر دستخط

پاکستان اور بھارت نے کرتارپور راہداری کھولنے کے معاہدے پر دستخط کردیئے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایکس پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان اور بھارت نے کرتارپور راہداری کھولنے کے معاہدے پر دستخط  کردیئے ہیں۔

پاکستانی دفترخارجہ کے ترجمان محمد فیصل نے پاکستان کی طرف سے معاہدے پر دستخط کیے جب کہ بھارت کی جانب سے بھارتی وزارت  خارجہ کے جوائنٹ سیکریٹری اور مذاکراتی ٹیم کے سربراہ ایس سی ایل داس نے معاہدہ پر دستخط کیے۔ کرتار پور معاہدے کے تحت روزانہ 5 ہزار سکھ یاتری بغیر ویزا گوردوارہ کرتار پور صاحب میں اپنی مذہبی رسومات ادا کرسکیں گے، متعین کردہ تعداد میں انفرادی یا گروپ کی شکل میں یاتری پیدل یا سواری کے ذریعے صبح سے شام تک سال بھر نارووال کرتارپورآسکیں گے جب کہ سرکاری تعطیلات اور کسی ہنگامی صورتحال میں یہ سہولت میسر نہیں ہوگی۔معاہدہ کے مطابق سکھ یاتریوں کو موثر بھارتی پاسپورٹ پر کرتارپور راہداری استعمال کرنے کی اجازت ہوگی، بیرون ملک رہائش پذیرسکھ یاتریوں کو بھارتی اوریجن کارڈ پرسہولت کا فائدہ اٹھانے کی اجازت ہوگی جب کہ بھارتی حکومت سکھ یاتریوں کی فہرست 10 دن قبل پاکستان کے حوالے کرے گی۔

News Code 1894834

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 2 =