صدر روحانی اور صدر پوتین کا دوطرفہ اور اہم علاقائی وعالمی امور پر تبادلہ خیال

آرمینیا کے دارالحکومت ایروان میں ایران کے صدر حسن روحانی اور روس کے صدر پوتین نے باہمی ملاقات میں دوطرفہ تعلقات اور اہم علاقائی وعالمی امور پر تبادلہ خیال کیا۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق آرمینیا کے دارالحکومت ایروان میں ایران کے صدر حسن روحانی اور روس کے صدر پوتین نے باہمی ملاقات میں دوطرفہ تعلقات اور اہم علاقائی وعالمی امور پر تبادلہ خیال کیا۔

اطلاعات کے مطابق ایران کے صدر روحانی اور روسی صدر پوتین نے آرمینیا میں اوریشین اقتصادی سربراہی اجلاس کے ضمن میں ملاقات کی۔ اس ملاقات میں صدر روحانی نے مشترکہ ایٹمی معاہدے میں روس کے اساسی ، مثبت اور بنیادی نقش کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایران مشترکہ ایٹمی معاہدے پر دستخط کرنے والے ممالک سے اپنے وعدوں پر عمل کرنے کا خواہاں ہے۔

صدر حسن روحانی نے ہرمز صلح منصوبہ کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ اس منصوبہ سے آبنائے ہرمز اور خلیج فارس ميں امن و سلامتی کومضبوط بنانے اور فروغ دینے میں مدد ملےگی۔

روسی صدر پوتین نے بھی اس ملاقات میں مشترکہ ایٹمی معاہدے کی ایک بار پھر حمایت کرتے ہوئے کہا کہ روس مشترکہ ایٹمی معاہدے پر دستخط کرنے والے ممالک کو اس پر عمل کے سلسلے میں پابند بنانے کی تلاش و کوشش جاری رکھےگا۔ روس اور ایران کے صدور نے اس ملاقات میں دونوں ممالک کے باہمی تعلقات کو مضبوط بنانے اور فروغ دینے پر تاکید کی۔

News Code 1894224

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 6 =