کراچی میں مکان کی چھت گرنے سے 2 افراد ہلاک

کراچی میں کھارادر مچھی میانی مارکیٹ میں رہائشی عمارت کی چھت گرنے سے میاں بیوی ملبے تلے دب کر ہلاک ہوگئے جبکہ ان کی 2 کم سن بیٹیاں زخمی ہوگئیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایکس پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ کراچی میں کھارادر مچھی میانی مارکیٹ میں رہائشی عمارت کی چھت گرنے سے میاں بیوی ملبے تلے دب کر ہلاک  ہوگئے جبکہ ان کی 2 کم سن بیٹیاں زخمی ہوگئیں۔ کے ایم سی گوشت مارکیٹ کے سامنے قدیم عمارت دیوی بائی بلڈنگ کی چھت رات گئے دھماکے سے گر گئی جس کے نتیجے میں گھر میں سوئے میاں، بیوی اور ان کی دو بچیاں ملبے میں دب گئیں۔

ایدھی، پولیس اور فائر بریگیڈ کی گاڑیاں موقع پر پہنچیں اور علاقہ مکینوں کی مدد سے امدادی کام شروع کیا۔ رضا کاروں نے ایک الماری کے نیچے دبی دو بچیوں کو بحفاظت نکال کر سول اسپتال منتقل کیا۔ بچیوں کی شناخت 10 سالہ زینب دختر اکرم اور 8 سالہ ثنیہ کے نام سے ہوئی۔

زینب نے ایکسپریس سے بات چیت کرتے ہوئے بتایا کہ وہ والدین کے ساتھ گھر میں سوئے ہوئے تھے کہ چھت منہدم ہوگئی اور الماری ان کے اوپر آگری، انہیں نہیں پتہ پھر کیا ہوا۔

ایک گھنٹے بعد بچیوں کے والد 35 سالہ محمد اکرم کو ملبے سے نکالا گیا جہاں ڈاکٹروں نے ان کی موت کی تصدیق کردی۔ آدھے گھنٹے بعد پولیس نے اکرم کے اہلیہ 30 سالہ نازیہ کو بھی نکال لیا جہاں ڈاکٹروں نے اس کی موت کی بھی تصدیق کر دی۔

ایس ایچ او کھارادر انسپکٹر احسن ذولفقار نے بتایا کہ جاں بحق میاں بیوی کا آبائی تعلق پنجاب سے تھا، دیوی بائی بلڈنگ 100 سال سے زائد پرانی ہے جسے کافی عرصہ قبل مخدوش قرار دے دیا گیا تھا اور مذکورہ خاندان کو عمارت خالی کرنے کو کہا گیا تھا لیکن وہ لوگ غربت کے باعث وہاں رہائش پذیر تھے۔

News Code 1893487

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 1 =