بھارتی فوج نے کشمیر کو سب سے بڑی جیل میں تبدیل کردیا

اسلامی تعاون تنطیم " او آئی سی " نے کہا ہے کہ بھارتی فوج نے کشمیر کو سب سے بڑی جیل میں تبدیل کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے الجزیرہ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ اسلامی تعاون تنطیم " او آئی سی "  نے کہا ہے کہ بھارتی فوج نے کشمیر کو سب سے بڑی جیل میں تبدیل کردیا ہے۔ او آئی سی کے ہیومن رائٹس کمیشن نے بھارت کے زیر انتظام کشمیرمیں کرفیو پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارتی فوج نے کشمیر کو سب سے بڑی جیل میں تبدیل کردیا ہے، بھارتی فورسز نے کشمیرمیں مواصلاتی نظام معطل کر رکھا ہے اور کشمیریوں کو انسانی حقوق سے بھی بُری طرح محروم کر رکھا ہے جس کی عالمی سطح پر مذمت کی جارہی ہے۔ او آئی سی نے کہا کہ کشمیرمیں بڑے پیمانے پرانسانی حقوق کی خلاف ورزیاں کی جارہی ہیں، صحافیوں، انسانی حقوق کی تنظیموں کے کارکنوں کو جھوٹے الزامات پر گرفتار کیا جا رہا ہے اور کشمیر کی سیاسی قیادت کو بھی بغیر کسی قانون کے قید کر رکھا ہے۔واضح رہے اس سے قبل بھی او آئی سی‘ نے کشمیری عوام کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھا کہ کشمیر پاکستان اور بھارت کے درمیان عالمی سطح پر تسلیم شدہ دو طرفہ اور متنازعہ مسئلہ ہے جس پر بھارت یک طرفہ طور پر کوئی فیصلہ نہیں کرسکتا۔ او آئی سی نے بھارت سے مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ کی قراردادوں کے تحت حل کرنے اور کرفیو ختم کر کے مواصلاتی نظام کی فوری بحالی کا مطالبہ بھی کیا تھا۔

News Code 1893473

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 4 =