پاکستان کے صوبہ پنجاب میں شوہروں کے قتل کے واقعات میں اضافہ

پاکستان کے صوبہ پنجاب میں بیویوں کے ہاتھوں شوہروں کے قتل کے واقعات میں اضافہ ہونے لگا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے پاکستانی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے صوبہ پنجاب میں بیویوں کے ہاتھوں شوہروں کے قتل کے واقعات میں اضافہ ہونے لگا ہے۔ معاشرے میں بڑھتی ہوئی بے راہ روی بگاڑ کا باعث بن رہی ہے، گزشتہ ایک سال میں گھریلو ناچاقی، میاں بیوی میں ازدواجی زندگی میں غلط فہمیوں کے باعث پنجاب میں 8 افراد اپنی ہی بیویوں کے ہاتھوں براہ راست یا ان کی ایما پر قتل ہوچکے ہیں۔ پولیس ریکارڈ کے مطابق بیویوں کے ہاتھوں شوہروں کے قتل کی وارداتوں میں اضافہ ہونے لگا ہے، گزشتہ ایک سال کے دوران متعدد وارداتوں میں شوہروں کے قتل میں بیویاں ہی ملوث پائی گئی ہیں۔

ایس ایس پی آپریشنز اسماعیل کھاڑک کا کہنا ہے کہ قتل کی ایسی واردات میں پولیس کی ابتدائی تفتیش میں بہت سے مختلف پہلو سامنے آتے ہیں جن میں شوہر کا ظالم ہونا، خاتون کی پسند کے خلاف شادی، غربت اور شوہر کا کسی دوسری عورت میں دلچسپی سمیت نشئی ہونا شامل ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ ہمارے ٹی وی چینلز پر چلنے والے کئی ایسے ڈرامے اور فلمیں ہیں جو کہ غیرملکی میڈیا کو کاپی کرتے ہیں اور معاشرے میں سدھار کے بجائے بگاڑ کا باعث بن رہے ہیں۔

ایس ایس پی انوسٹی گیشن ذیشان اصغر کا کہنا ہے کہ اس طرح کے واقعات میں سب سے زیادہ سامنے آنے والی وجہ خواتین کی شادی ان کی پسند کے خلاف ہونا ہے جس سے ان کی ازدواجی زندگی متاثر رہتی ہے اور وہ اپنے خاوند کو قبول نہیں کرپاتیں۔

News Code 1893025

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 3 =