برطانیہ کو ایرانی تیل بردار کشتی ضبط کرنے پر منہ توڑ جواب دیا جائےگا

اسلامی جمہوریہ ایران کی مسلح افواج کے چیف آف اسٹاف میجر جنرل محمد باقری نے کہا ہے کہ ایرانی تیل بردار کشتی کو ضبط کرنے پر برطانیہ کو بھر پوراور منہ توڑ جواب دیا جائےگا۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کی مسلح افواج کے چیف آف اسٹاف میجر جنرل محمد باقری نے کہا ہے کہ ایرانی تیل بردار کشتی کو ضبط کرنے پر برطانیہ کو بھر پوراور منہ توڑ جواب دیا جائےگا۔ میجر جنرل باقری نے مشترکہ ایٹمی معاہدے کے سلسلے میں امریکہ اور یورپی ممالک کی عہد شکنی اور خلاف ورزکی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایران نے گذشتہ ایک سال تک صبر کا مظاہرہ کیا اور ایران نے عالمی برادری کے سامنے ثابت کردیا کہ ایران نے مشترکہ ایٹمی معاہدے میں کئے گئے اپنے تمام وعدوں پر عمل کیا ہے اور اس سلسلے میں بین الاقوامی ایٹمی ادارے نے اپنی دس سے زائد رپورٹوں میں تائید کی کہ ایران اپنے وعدوں پر عمل پیرا ہے۔ میجر جنرل باقری نے کہا کہ ایران یکطرفہ طور پر معاہدے پر باقی نہیں رہ سکتا ۔ انھوں نے برطانیہ کی طرف سے ایرانی تیل بردار کشتی کو ضبط کرنے کے اقدام کو اشتعال انگیز قراردیتے ہوئے کہا کہ ایران برطانیہ کو منہ توڑ جواب دینے کے لئے آمادہ ہے۔ میجر جنرل محمد باقری نے ایرانی موقف کو دہراتے ہوئے کہا کہ ایرانی تیل بردار کشتی  کو بے بنیاد وجوہات کی بنا پر روکا گیا ہے، یہ عالمی قوانین  اور مشترکہ ایٹمی معاہدے کی بھی خلاف ورزی ہے اور ہم ملکی اور قومی مفادات کے تحفظ کیلیے ہر حد تک جائیں گے۔

News Code 1892015

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 1 =