بھارت میں ہندو دہشت گردوں کا مسلمانوں پر تشدد

بھارت میں ہندو دہشت گردوں نے گائے کے گوشت سے روزہ افظار کرنے کا الزام عائد کر کے 4 مسلمان مزدوروں کو بیلٹ، لاتوں اور گھونسوں سے بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنایا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے بھارتی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بھارت میں ہندو دہشت گردوں نے گائے کے گوشت سے روزہ افظار کرنے کا الزام عائد کر کے 4 مسلمان مزدوروں کو بیلٹ، لاتوں اور گھونسوں سے بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنایا۔ اطلاعات کے مطابق بھارتی ریاست اتر پردیش میں 4 مسلمان شہری محنت مزدوری کے بعد روزہ افطار کرنے بیٹھے تھے کہ اچانک ہندو دہشت گردوں نے حملہ کردیا۔ ہندو دہشت گردوں نے مسلمانوں پر گائے کا گوشت کھانے کا الزام لگا کر چمڑے کی بیلٹ سے پیٹھ پر ضربیں لگائیں اور لاتوں، گھونسوں کا آزادانہ استعمال کیا، اس دوران مسلمان مزدور رحم کی اپیل کرتے رہے لیکن ہندو گرد تشدد سے باز نہ آئے۔ مسلمانوں پر تشدد کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی جس کے بعد پولیس حرکت میں آئی، پولیس نے آدیش ولمکی اور منیش سمیت 4 نامعلوم افراد کیخلاف ایف آئی درج کرکے ملزمان کی گرفتاری کیلیے 2 چھاپہ مار ٹیمیں تشکیل دے دی ہیں۔

News Code 1891040

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 2 =