دبئی میں مقیم بھارتی مسلمان نے بیٹے کا نام مودی رکھ دیا

دبئی میں رہائش پذیر ایک بھارتی مسلمان نے اپنے بیٹے کا نام " نریندر دامودرداس مودی " رکھ دیا ہےتاکہ بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی ان سے ملنے ان کے گھر آئیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے خلیج ٹائمز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ دبئی میں رہائش پذیر ایک بھارتی مسلمان نے اپنے بیٹے کا نام  " نریندر دامودرداس مودی " رکھ دیا ہےتاکہ بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی ان سے ملنے ان کے گھر آئیں۔ خلیج ٹائمز کے مطابق دبئی میں رہنے والے مشتاق احمد نامی بھارتی مسلمان شخص کا خواب ہے کہ وزیر اعظم نریندر مودی اُن سے ملنے اُن کے گھر آئیں، اپنی اس خواہش کو پورا کرنے کے لیے اس نے اپنے 3 دن کے بیٹے کا نام ’نریندر دامودرداس مودی‘ رکھ دیا۔

مشتاق احمد نے خلیج ٹائمز کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اُن کی بہت خواہش تھی کہ وہ نریندر مودی سے ملاقات کریں اس لیے انہوں نے اپنے بیٹے کا نام نریندر دامودرداس مودی رکھا۔ انہوں نے اپنی خواہش کا اظہار کرتے ہوئے مزید کہا کہ بھارتی وزیر اعظم مودی اُن کے گاؤں اُتر پردیش آئیں، ننھے مودی سے ملاقات کریں اور اس کے لیے نیک تمنائوں کا اظہار کریں۔

مشتاق کا آبائی گاؤں اُتر پردیش میں ہے جبکہ وہ خود دبئی سے 150 کلو میٹر دورہتہ کی ایک کمپنی میں ملازمت کرتے ہیں۔ احمد کا کہنا تھا کہ انہوں نے اپنے بیٹے کا نام مودی ، اُس دن رکھا جس دن بھارت میں نریندر مودی کو انتخابات میں جیت ہوئی تھی۔

News Code 1890876

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 8 =