ہندوستان میں پہلا دہشت گرد ہندو تھا/ دہشت گرد کا کوئی مذہب نہیں ہوتا

ہندوستان کے معروف اداکار اور سیاستداں کمل ہاسن نے کہا ہے کہ ہندوستان کا سب سے پہلا دہشت گرد ایک ہندو نتھو رام تھا جس نے گاندھی کو قتل کیا۔ ہندوستان کے دوسرے اداکار نے کہا ہے کہ دہشت گردوں کا کوئیم ذہب نہیں ہوتا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے بھارتی ویب سائٹ انڈیا ٹوڈے کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ہندوستان کے معروف اداکار اور سیاستداں کمل ہاسن نے کہا ہے کہ ہندوستان کا سب سے پہلا دہشت گرد ایک ہندو نتھو رام تھا جس نے گاندھی کو قتل کیا۔ ہندوستان کے دوسرے اداکار نے کہا ہے کہ دہشت گردوں کا کوئیم ذہب نہیں ہوتا۔

اطلاعات  کے مطابق معروف اداکار اور سیاسی جماعت ’مکال نیدھی مایئم‘ کے سربراہ کمل ہاسن نے گزشتہ روز اپنے خطاب میں کہا تھا کہ بھارت کی آزادی کے بعد یہاں سب سے بڑی دہشت گردی کی واردات ایک ہندو ’نتھو رام گوڈ‘ نامی شخص نے مہاتما گاندھی کو قتل کرکے کی تھی۔

کمل ہاسن نےاپنے خطاب میں مزید کہا تھا کہ کسی ایک طبقے یا اقلیت کو مجموعی طور پر دہشت گرد قرار دینا کسی طور مناسب نہیں کیونکہ بھارت کا پہلا دہشت گرد ’نتھو رام‘ تھا جو ایک ہندو تھا اور جس نے مہاتما گاندھی کا قتل کیا تو کیا ساری ہندو کمیونٹی دہشت گرد ہوگئی؟ کیا ہر ایک ہندو کو دہشت گرد اور قاتل سمجھا جانا چاہیے؟

انہوں نے کہا تھا کہ کسی پر الزام لگانے سے پہلے اپنے گریبان میں جھانک لینا چاہیے۔

کمل ہاسن کے اس خطاب کے بعد سے اُنہیں شدید تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے، بھارتی اداکار ویوک اوبرائے نے بھی کمل ہاسن پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ’اگر آپ یہ کہیں کہ نتھو رام گوڈ ایک دہشت گرد تھا تو یہ درست ہے کیونکہ میرے لیے مہاتما گاندھی کو قتل کرنے والے شخص کے لیے بالکل ہمدردی نہیں ہے، لیکن یہ کیوں کہا کہ وہ ایک ہندو تھا؟۔

اداکار ویوک اوبرائے نے مزید کہا کہ کمل ہاسن ایسی بات کرکے ’ہندو فوبیا‘ کو کیوں پھیلا رہے ہیں ؟

واضح رہے کہ اداکار ویوک اوبرائے بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کی زندگی پر بننے والی فلم میں مودی کا کردار ادا کررہے ہیں۔  سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پرویوک اوبرائے نے کمل ہاسن کے خطاب کا جواب دیتے ہوئے لکھا کہ ’آپ ایک بہترین آرٹسٹ ہیں اور جیسے آرٹ کا کوئی مذہب نہیں ہوتا، ویسے ہی دہشت گردی کا بھی کوئی مذہب نہیں ہوتا۔ آپ کہتے نتھو رام گوڈ دہشت گرد تھا، یہ کیوں کہا کہ وہ ہندو تھا؟۔

News Code 1890542

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 7 =